یہ ہندوستان پہلے والاہندوستان نہیں رہا،اس حقیقت کو دنیا بھی سمجھ رہی ہے:جے پی نڈا

نئی دہلی:بی جے پی کے صدر جے پی نڈا نے بدھ کے روز کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی کی سربراہی میں ہندوستان کورونا وائرس کے ساتھ سرحد پر پاکستان اور چین کابھی مضبوطی سے مقابلہ کررہاہے۔ آج کا ہندوستان پہلے والا ہندوستان نہیں ہے۔ ہندوستان کی اس شبیہ کو دنیا بھی سمجھ رہی ہے۔نڈا نے ہریانہ میں نو تشکیل شدہ ضلعی پارٹی دفاتر کا افتتاح کرنے کے بعدلیڈران اور کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے یہ بھی کہا کہ کورونا وائرس کے نتیجے میں ملک بھر میں لاک ڈاؤن کے دوران بی جے پی جموں وکشمیر سے دفعہ 370 کی منسوخی، ٹرپل طلاق کے عمل کو منسوخ کرنے اور شہریت ترمیمی ایکٹ سمیت گذشتہ چھ سالوں میں مودی حکومت کی کامیابیوں کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اس وزیر اعظم مودی کی قوت ارادی اور امت شاہ کی حکمت عملی کامیاب رہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ مودی جی کی قیادت میں کئے گئے کام نے ملک کی تقدیر اور تصویر کو بدل دیا ہے۔ہندوستان کی شبیہ بین الاقوامی نقطہ نظر سے بنائی گئی ہے۔ آج جب چین کے ساتھ تعطل جاری ہے تو دنیا سمجھتی ہے کہ ہندوستان بدل گیا ہے۔ ہندوستان اس طرح نہیں ہے جیسا پہلے اسے دیکھا گیا تھا۔نڈا نے کہاکہ آج ہم کورونا سے لڑ رہے ہیں، آج ہم پاکستان کے ساتھ بھی لڑ رہے ہیں اور گلوان میں چین کے ساتھ تعطل کا شکار ہیں، ہماری فوج کھڑی ہے اور 130 کروڑ پورا ملک کھڑا ہے۔لاک ڈاؤن کے دوران بی جے پی تنظیم کی طرف سے ملک بھر میں چلائے جانے والے پروگراموں کا حوالہ دیتے ہوئے بی جے پی صدر نے کہا کہ اس مدت کے دوران بھی پارٹی نے ڈیجیٹل ذریعہ کا استعمال کیا، وہ لوگوں سے رابطے میں رہی۔انہوں نے کہاکہ تمام سیاسی جماعتیں لاک ڈاؤن میں بند تھیں، آج بھی ہیں، بی جے پی ویڈیو کانفرنسنگ اور ڈیجیٹل ذرائع کے ذریعے رابطے کی مہم کو اوپر سے لے کر نیچے تک آگے بڑھایا۔ انہوں نے تنظیم سے مطالبہ کیا کہ وہ اپنے کام کو ایک نئی رفتار اور نئی توانائی کے ساتھ آگے بڑھائے۔ بی جے پی نے اتنی خدمت کبھی نہیں کی تھی جتنی اس نے لاک ڈاؤن کے وقت کی ۔