یومِ اساتذہ مبارک ـ عبداللہ ممتاز

یوم اساتذہ مبارک ان خستہ حالوں کو، ان شکستہ بالوں کو، ستم ظریفیِ زمانہ کے شکار ان جیالوں کو جو مصائب کی سخت تپش میں سائبان بن کر کھڑے رہے،یوم اساتذہ مبارک ان مظلوموں کو جنھوں نے اپنا سب کچھ داؤ پر لگا کر ہمیں علم کی راہ دکھائی، ہمیں انگلی پکڑ کر چلنا سکھایا،یوم اساتذہ مبارک دنیا کے سب سے مظلوم طبقۂ اساتذہ کو جن کی تنخواہیں معمولی مزدور سے بھی کم ہونے کے باوجود تن من سے ہمیں تراشنے میں لگے رہے، یوم اساتذہ مبارک دنیا کے اس طبقے کو جس کی تنخواہیں بڑھنے کا تناسب پوری دنیا میں سب سے کم ہے؛ لیکن کبھی احتجاج اور دھرنے پر نہیں گیا؛ بلکہ پورے جی جان سے ہمیں سنوارتا رہاـ
یوم اساتذہ مبارک ان خراب حالوں کو جو بیک وقت مدرس بھی رہے، سفیر بھی،یوم اساتذہ مبارک ان مفلوک الحال اساتذہ کو جو ایک طرف بچوں کی شرارتوں کو سہتے رہے اور دوسری طرف چندہ دہندگان کی بدتمیزیوں کو،یوم اساتذہ مبارک ان گم نام ہستیوں کو جنھوں نے ہزاروں ایسے شاگرد بنا دیے جو خوشحالی کی زندگی جی رہے ہیں اور شہرت و ناموری کے عروج پر ہیں؛ لیکن وہ آج بھی کسی جھونپڑی میں گمنامی کی زندگی بسر کر رہے ہیں، یوم اساتذہ مبارک ان فرش نشینوں کو جنھوں نے کتنوں کو عرش نشیں بنا دیا اور خود آج تلک فرش نشیں ہی ہیں،یوم اساتذہ مبارک قوم کے ان معماروں کو جنھوں نے تعمیر قوم کے لیے اپنا سب کچھ تج دیا؛ لیکن قوم نے انھیں طعنوں کے سوا کچھ نہیں دیا،یوم اساتذہ مبارک ان سنگ تراشوں کو جنھوں نے قوم کے بچوں کے لیے اپنے بچوں کے شوق کو قربان کردیا، یوم اساتذہ مبارک ان ٹوٹے ہوے دلوں کو جو قوم کو تعلیم یافتہ بناتے رہے؛ لیکن جہیز کے چکر میں ان کی جواں سال بیٹی باپ کی دہلیز پر بیٹھی رہی،یوم اساتذہ مبارک ان پھٹے حالوں کو جو قوم کو تعلیم دیتے رہے؛ لیکن ان کی بیٹیاں جہیز کی خاطر جلا دی گئیں، یوم اساتذہ مبارک ان بجھے چہروں کو جنھوں نے قوم کو تعلیم دی، اس کے بدلے میں وہ متوسط سے بھی نیچے درجے کی زندگی گزارتے رہے تب بھی چہار طرف سے تنیقدوں کے تیر انہی پر برسے اور پیوست ہوتے رہے، یوم اساتذہ مبارک ان بہادروں کو جنھوں نے قوم کو تعلیم دی؛ لیکن قوم نے تمام ناکامیوں کا ٹھیکرا ان کے سر پر پھوڑا،یوم اساتذہ مبارک ان دکھے دلوں کو بھی جنھوں نے سالہا سال معمولی تنخواہوں پر خدمت کی، آج وہ گھر پر بے دست وپا بیٹھے ہیں، مدارس نے انھیں مدرسہ سے نکال باہر کردیا،یوم اساتذہ ان ستائے ہووں کو بھی جنھوں نے سالہا سال تک قوم کو تعلیم دی؛ لیکن آج وہ قوم کی بے حسی کی وجہ سے تنخواہوں سے محروم ہیں، یوم اساتذہ مبارک ان غیرتمندوں کو جنھیں تنخواہ ملے چار چار چھ چھ ماہ گزر چکے ہیں؛ لیکن وہ کسی کے سامنے ہاتھ پھیلا سکتے ہیں اور نہ ہی قوم ان کی حال پرسی کرتی ہےـ
یوم اساتذہ مبارک دنیا کے سب سے مظلوم، مقہور طبقۂ اساتذہ کو ـ اللہ آپ کا بھلا کرے، اللہ آپ کو جزائے خیر دے، اللہ ہی آپ کا سہارا اور حامی وناصر ہوـ (آمین)

    Leave Your Comment

    Your email address will not be published.*