اردویونیورسٹی کی 15؍ فروری کو دوبارہ کھولنے کا دوسرا مرحلہ،تمام ریسرچ اسکالرس کو یونیورسٹی آنے کی اجازت

حیدرآباد:مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی انتظامیہ نے یونیورسٹی گرانٹس کمیشن ، نئی دہلی کے جاری کردہ رہنمایانہ خطوط کی تعمیل میں یونیورسٹی کی مرحلہ وار دوبارہ کشادگی کا آغاز 27 ؍جنوری 2021 کو کیا تھا۔ 15؍ فروری کو دوسرے مرحلے کی کشادی گی عمل میں آرہی ہے۔ پروفیسر سید علیم اشرف جائسی، ڈین بہبودیٔ طلبہ وصدرنشین دوبارہ کشادگی کمیٹی کے بموجب دوسرے مرحلے میں تمام شعبوں کے ریسرچ اسکالرس کو یونیورسٹی آنے کی اجازت دی گئی ہے۔ہاسٹل کی سہولت صرف اہل طلبہ کو دی جارہی ہے۔ جن طلبہ نے اسے ’’عارضی سہولت‘‘ کے طور پر حاصل کیا تھا اور جو اسکالر پی ایچ ڈی کے دوران 4 سال تک ہاسٹل سے استفادہ کرچکے ہیں، انہیں یہ سہولت نہیں دی جائے گی۔ تمام متعلقہ شعبوں کے صدور اور لڑکوں؍ لڑکیوں کے ہاسٹلس کے پرووسٹ و نیز پراکٹر سے دوسرے مرحلے کی کشادگی میں سہولت پہنچانے کے لیے کہاگیاہے۔ یہاں اس بات کا تذکرہ بیجا نہ ہوگا کہ اردویونیورسٹی نے لاک ڈاؤن کے آغاز ہی سے آن لائن کلاسس کا سلسلہ شروع کردیا تھا۔ یونیورسٹی نے دو سمسٹرس کے امتحان بھی کامیابی کے ساتھ آن لائن منعقد کیے ہیں۔