انڈر 19 ورلڈ کپ میں ہندوستان کا مقابلہ پاکستان سے

پوٹ چیفسروم :
چار بار کی چمپئن ہندوستانی ٹیم انڈر 19 ورلڈ کپ کے پہلے سیمی فائنل میں منگل کو روایتی حریف پاکستان سے کھیلے گی تو اس کا مقصد مسلسل تیسرے فائنل میں جگہ بنانے کا ہوگا۔ دونوں ٹیمیں سیمی فائنل تک ناقابل تسخیر رہی ہیں۔ہندوستان نے کوارٹر فائنل میں آسٹریلیا کو اور پاکستان نے افغانستان کو شکست دی۔پاکستان کے کپتان روہیل نذیر نے اس میچ کو لے کر زیادہ جذباتی ہونے سے انکار کیا لیکن یہ حقیقت ہے کہ ٹورنامنٹ میں یہ سب سے زیادہ دباؤ والا میچ ہوگا۔اس میں دونوں ٹیموں کے کھلاڑیوں کا اصل امتحان ہو گا۔اس میچ میں اچھا کھیلنے سے کوئی بھی کھلاڑی راتوں رات اسٹار بن جائے گا۔پاکستان کے اوپنر محمد ہریرہ نے افغانستان پر ملی جیت کے بعد کہا تھاکہ یہ کافی دباؤ والا میچ ہے اور اسے لے کر کافی پُرجوش ہیں۔ہم اسے عام میچ کی طرح لیں گے اور بہترین کارکردگی کی کوشش کریں گے۔سینئر کی طرح ہی ہندوستانی جونیئر ٹیم کا پاکستان پر پلڑا بھاری ہے۔ ہندوستان نے گزشتہ سال ستمبر میں اس ایشیا کپ میں بھی شکست دی تھی۔انڈر 19 ورلڈ کپ میں گزشتہ چمپئن ہندوستان نے 2018 ورلڈ کپ میں پاکستان کو 203 رنز سے شکست دی تھی۔ویسے کرکٹ میں روایت معنی نہیں رکھتی اور پریم گرگ کی کپتانی والی ٹیم کو پاکستان پر جیت درج کرنے کے لیے اپنی بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنا ہوگا۔اوپنر یشسوی جیسوال ہندوستانی بلے بازی کے محور رہے ہیں جنہوں نے چار میچوں میں تین نصف سنچری لگائے ہیں۔باقی بلے بازوں کی کارکردگی قابل ذکر نہیں رہی۔اگر کوارٹر فائنل میں نچلے آرڈر کے بلے باز نہیں چلتے تو نتیجہ کچھ اور بھی ہو سکتا تھا۔تیز گیند باز کارتک تیاگی نے بھی عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کیا تھا۔اتھرو اکولیکر اور فارم میں چل رہے لیگ اسپنر روی وشنوی نے ساتویں وکٹ کے لیے 61 رنز کی شراکت کی جس کی بدولت ہندوستان نے جیت درج کی۔پاکستانی تیز گیند باز عباس آفریدی، محمد عامر خان اور طاہر حسین کو کھیلنا ہندوستانی بلے بازوں کے لیے آسان نہیں ہوگا۔اوپنر ہریرہ نے گزشتہ میچ میں 64 رنز بنا کر پاکستان کی جیت میں اہم کردار ادا کیا۔

    Leave Your Comment

    Your email address will not be published.*