علماو دانشوران کے ایک وفدکی نائب امیرشریعت سے ملاقات،انتخابِ امیر سے متعلق اہم امورپرتبادلۂ خیال

پھلواری شریف(پریس ریلیز): 15 افراد پرمشتمل علماء اوردانشوروں کے ایک وفد نے امارت شرعیہ پھلواری شریف پٹنہ پہونچ کرنائب امیرشریعت مولاناشمشادرحمانی اوردیگرذمہ داروں سے ملاقات کی۔وفدکی قیادت دیوبندسے آئے مولاناریاست اللہ قاسمی کررہے تھے۔اس وفدنے نائب امیرشریعت سے مختلف امورپرتبادلہ خیال کیا،وفدنے نائب امیرشریعت سےسب کمیٹی جوکہ 11ارکان پرمشتمل ہے کے بارے میں دریافت کیاکہ کیاایسے وقت میں جب کہ دستورکے مطابق نہ توامیرشریعت ہیں اورنہ ہی ناظم امارت شرعیہ،سب کمیٹی کے ذریعہ نئے ارباب حل وعقدکی نامزدگی کہاں تک درست ہےاورپھروفدنے امارت ٹرسٹ ڈیڈکی دفعہ 16 شق (ح) کاحوالہ دیتے ہوئے کہاکہ اس دفعہ کے مطابق یہ نئے ارباب حل وعقدکی نامزدگی بالکل غیردستوری ہے۔ کیوں کہ امارت کے دستورکے مطابق اس کمیٹی میں امیرشریعت،نائب امیرشریعت،ناظم امارت شرعیہ ،قاضی امارت شرعیہ اورمفتی امارت شرعیہ لازمی رکن ہوتے ہیں،جبکہ موجودہ صورت حال میں نہ تو کوئی امیر شریعت ہے اورنہ ہی کوئی مستقل ناظم ہے،اس لئے اس کمیٹی کے ذریعہ نئی نامزدگیاں سراسردستورکے خلاف ہیں۔نیزوفدکے ارکان نے یہ بھی سوال کیاکہ دستورکے مطابق ارباب حل وعقدکی میقات دس سال ہےاوردس سال کے بعدہی ارباب حل وعقدکاانتخاب ہوسکتاہےاورابھی موجودارکان کی میقات پوری نہیں ہوئی ہے توپھرآپ کس طرح نئے ارباب حل وعقدمنتخب کرنے کے لئے کمیٹی تشکیل دے رہے ہیں۔کمیٹی کے تعلق سے نائب امیرشریعت سے یہ وضاحت بھی طلب کی گئی کہ اس 11 رکنی کمیٹی میں اکثریت رحمانی گروپ سے تعلق رکھتے ہیں،جن میں سے دوشخص کاتعلق براہ راست ایک ہی ادارے سے ہے اوراس کے علاوہ اکثرافرادکاتعلق رحمانی گروپ سے ہے جس سے اس بات کاقوی امکان ہے کہ وہ ارباب حل وعقدکی نامزدگی میں جانبداری سے کام لیں گے،اسی طرح جب ان سے ارباب حل وعقدکے میقات کے تعلق سے سوال کیاگیا ،تو اس پرنائب امیرشریعت نے کوئی واضح جواب نہیں دیاالبتہ یہ ضروریقین دلایاکہ امیرکاانتخاب دستورکے مطابق ہوگااوراسے پوری شفافیت سے انجام دیاجائے گا۔وفدکے ارکان نےنائب امیرشریعت پرزوردے کریہ مطالبہ کیاکہ موجودہ ارباب حل وعقدکے ارکان کے ذریعے ہی نئے امیرکاانتخاب کرایاجائے،نئی نامزدگیاں چوں کہ غیردستوری ہے اس لئے وہ کسی بھی صورت قابل قبول نہیں ہوں گی اوراس سے انتشارکاخدشہ ہے۔واضح رہے کہ مجلس کاآغازنائب ناظم مولاناسہیل ندوی کی تلاوت کلام اللہ سے ہواجب کہ پروگرام کااختتام مولاناریاست اللہ قاسمی کی دعاپرہوا۔
اس وفدمیں انجینئرتنویرعالم علیگ صدر اے ایم یواولڈبوائز ایسوسی ایشن،مولاناحمادغزالی قاسمی سیتامڑھی،ڈاکٹرتسکین عالم علیگ نیشنل کوآرڈینیٹرمسلم ڈاکٹرس ایسوسی ایشن دربھنگہ،تنویرعالم رضوی علیگ آرہ،قاری انوارہارون نگرپٹنہ،انورپھلواری شریف،خورشیدعرف بڑابابوپھلواری شریف،منورصاحب پھلواری شریف، مولانا عبدالماجدقاسمی شانتی سندیش کیندرپھلواری شریف پٹنہ،ڈاکٹرانعام الحق عالم گنج پٹنہ کے علاوہ پٹنہ واطراف کے کئی اہم افرادشامل تھے۔