ٹی ایم سی نے سی بی آئی کے خلاف ایف آئی آر درج کرائی

کولکاتہ:ناردا کیس آپریشن کیس میں پھنسے ٹی ایس ایم رہنماؤں کو آج (بدھ) کو بھی ضمانت نہیں ملی۔ ناردا کیس کے چاروں ملزمان کی ضمانت پر کل (جمعرات) کو دوبارہ سماعت ہوگی۔ کل کلکتہ ہائی کورٹ میں کیس کی سماعت دوپہر 2 بجے ہوگی۔ ادھر ٹی ایس ایم کی جانب سے سی بی آئی کے خلاف مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ ٹی ایس ایم کا کہنا ہے کہ اس کے رہنماؤں کی گرفتاری غیر قانونی ہے۔ٹی ایم سی کے جولیڈران بی جے پی میں چلے گئے ہیں اوران پربدعنوانی کاالزام ہے ،ان کی گرفتاری نہیں ہوئی ہے۔17 مئی کو جس دن سی بی آئی نے ناردا اسٹنگ کیس میں ترنمول کانگریس کے 3 سینئر رہنماؤں کو گرفتار کیا تھا ، اسی دن ٹی ایس ایم آئی نے سی بی آئی کے خلاف شکایت درج کروائی تھی۔ مغربی بنگال حکومت کے سینئر وزیر چندریما بھٹاچاریہ نے کولکاتہ پولیس ہیڈ کوارٹر لال بازار میں سی بی آئی کے خلاف شکایت درج کروائی جس میں یہ دعویٰ کیاگیاہے کہ یہ گرفتاریاں ’غیرقانونی‘ ہیں۔ شکایت کے سلسلے میں کلکتہ پولیس نے بدھ کے روز سی بی آئی کے خلاف ایف آئی آر درج کی۔وزیر چندریمابھٹاچاریہ کی شکایت میں کہاگیاہے کہ گرفتاری غیر قانونی تھی کیونکہ اسپیکر سے کسی کی اجازت نہیں لی گئی تھی جس کے لیے قانون سازلیڈر کی گرفتاری ضروری ہے۔ شکایت میں سی بی آئی عہدیداروں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا گیا ہے جنہوں نے وزیر اعظم مودی کے کہنے پر قائد کو گرفتار کیا تھا۔