تیلگو ٹی وی اداکارہ شروانی کونڈاپلی نے کی خودکشی،بوائے فرینڈ پرہراسانی کا الزام

حیدرآباد:تیلگو ٹیلی ویژن کی اداکارہ کونڈاپلی شروانی نے حیدرآباد میں واقع اپنے گھر میں مبینہ طور پر خودکشی کرلی۔ پولیس نے بدھ کے روز یہ اطلاع دی ہے۔ 26 سالہ شروانی منگل کے روز مدھور نگر میں واقع اپنی رہائش گاہ پر لٹکی ہوئی پائی گئیں۔ کنبہ کے افراد نے بتایا کہ وہ اپنے سونے کے کمرے میں گئی اور دروازہ بند کرلیا، اسے لگا کہ وہ نہا رہی ہے لیکن جب وہ زیادہ دیر باہر نہیں نکلی تو اس نے دروازہ توڑا اور دیکھا کہ وہ لٹک رہی ہے۔ وہ اسے اسپتال لے گئے جہاں ڈاکٹروں نے اسے مردہ قرار دے دیا۔کنبہ نے الزام لگایا ہے کہ شروانی نے اپنے سابق عاشق دیوجراج ریڈی کے ذریعہ ہراساں کرکے پریشان ہونے کے بعد یہ قدم اٹھایا ہے۔ پولیس نے کہا ہے کہ کچھ دن قبل اس کے اہل خانہ نے اس کے خلاف مقدمہ درج کیا تھا اور اس نے شروانی کو بھی اپنے ساتھ لٹکانے کی وارننگ دی تھی۔ایس آر نگر سرکل کے انسپکٹر نرسمہا ریڈی نے بتایا کہ ابتدائی تفتیش سے انکشاف ہوا ہے کہ منگل کی رات دیر سے شروانی کی اپنی ماں اور بھائی کے ساتھ دیوراج کے ساتھ گھومنے کولے کر جھگڑا ہوا تھا۔ اس کے بعد وہ اپنے کمرے میں گئی اور خود کو پھانسی لگالی۔ سرکل انسپکٹر نے کہاکہ شروانی کا کنبہ ان پر الزام لگا رہا ہے، اس لئے ہم اسے گرفتار کریں گے اور پوچھ گچھ کریں گے۔پولیس افسر نے بتایا کہ دیوراج کو جون میں شروانی کی شکایت کے بعد گرفتار کیا گیا تھا، جس میں کہا گیا تھا کہ وہ اسے شروانی سے شادی کے لئے ہراساں کررہا ہے۔کنبہ کے افراد نے الزام لگایا ہے کہ دیوراج کے خلاف شکایت کے بعد بھی پولیس کارروائی کرنے میں ناکام رہی ہے۔ دیوراج چند ماہ قبل ٹک ٹاک کے ذریعے اداکارہ کے ساتھ رابطے میں آئے تھے اور پھر دونوں کی دوستی محبت میں بدل گئی تھی۔شروانی کے اہل خانہ نے کہا ہے کہ دیوراج نے اسے پیسوں کے لئے تنگ کرنا شروع کیا، وہ دھمکی دے رہا تھا کہ وہ اس کی پرسنل تصاویر اور ویڈیوز سوشل میڈیا پر پوسٹ کردے گا،تو کنبہ نے گوگل پے کے ذریعہ دیوراج کو 1 لاکھ روپے بھی دیے تھے۔