تارکین وطن مزدوروں کو وزیراعلی کجریوال نے دلایا بھروسہ

کہا آپ کی ذمہ داری ہماری ہے، بے سہارا نہیں چھوڑیں گے
نئی دہلی:کورونا بحران کی وجہ پورے ملک بھر میں تارکین وطن مزدور دربدر ہوچکے ہیں۔ملک کے مختلف حصوں سے خوفناک تصاویر سامنے آ رہی ہیں جہاں یہ مزدور پیدل ہی سینکڑوں کلومیٹر کا سفر طے کرنے پر مجبور ہیں۔دہلی کے وزیر اعلی اروند کجریوال نے تارکین وطن محنت کشوں کو بھروسہ دلاسے ہوئے کہا ہے کہ ان کو کسی طرح کی کوئی تکلیف نہیں ہونے دیں گے۔دہلی حکومت نے ایک حکم بھی جاری کیا ہے۔اس حکم کے مطابق تمام افسران کو ہدایت کی گئی ہے کہ تارکین وطن محنت کشوں کو کوئی بھی تکلیف نہیں ہونی چاہئے۔سی ایم کجریوال نے ٹویٹ کرتے ہوئے لکھاکہ دہلی میں رہ رہے تارکین وطن محنت کشوں کی ذمہ داری ہماری ہے،اگر وہ دہلی میں رہنا چاہتے ہیں تو ان کا پورا خیال رکھیں گے اور اگر وہ اپنے گاؤں واپس جانا چاہتے ہیں تو ان کے لئے ٹرین کا انتظام کر رہے ہیں،کسی بھی حالت میں انہیں بے سہارا نہیں چھوڑیں گے۔دہلی کے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا نے معلومات دیتے ہوئے بتایا ہے کہ دہلی حکومت کی طرف سے ورکرز اسپیشل ٹرین سے کل شام تک 35000 مسافرین بھیجے جا چکے ہیں۔آج بھی 8 ٹرین قریب 12000 مسافروں کو لے کر جا رہی ہے۔انہوں نے آج بہت سے سینٹرز پر جاکر مزدوروں کا جائزہ بھی لیا،جن کی تصاویر انہوں نے ٹویٹ کی اور لکھا کہ آج ایسے ہی کچھ سینٹرز پر جاکر مسافروں کے طبی جانچ کا جائزہ لیا۔