تمام بینکوں کی نجی کاری نہیں ہوگی:نرملا سیتارمن

نئی دہلی:مرکزی وزیر خزانہ نرملا سیتارامن نے یقین دہانی کرائی ہے کہ ملک کے تمام بینکوں کی نجی کاری نہیں کی جائے گی۔ بینکوں کے تمام ملازمین کے مفادات کا تحفظ کیا جائے گا جن کی نجی کاری کی جائے گی۔جب کہ حکومت کے وعدوں پرانھیں یقین نہیں ہے کیوں کہ نوٹ بندی کے فوائدہوں یاکالادھن واپسی یادوکروڑروزگار،مہنگائی کی مارکانعرہ ہو،سب نے ان وعدوں کاحال دیکھ لیاہے۔یہی وجہ ہے کہ کسان بھی کسی یقین دہانی کونہیں مان رہے ہیں۔ حکومت نے بجٹ میں دو سرکاری بینکوں کی نجکاری کا اعلان کیا تھا ، حالانکہ ان کے ناموں کا ابھی تک اعلان نہیں کیا گیا ہے۔وزیر خزانہ نرملا سیتارامن کا یہ بیان ایک ایسے وقت میں آیا ہے جب بینکوں کی نجی کاری اور انویسٹمنٹ سے متعلق دیگر فیصلوں کے خلاف بینک ملازمین دو روزہ ہڑتال پر جارہے ہیں۔ یہ ہڑتال یونائیٹڈ فورم آف بینک یونین کے تحت کی جارہی ہے۔ اس میں نو بڑی بینک یونینیں شامل ہیں۔سیتارامن نے واضح کیاہے کہ دو بینکوں کی نجی کاری کافیصلہ دانستہ فیصلہ ہے۔ اس میں کوئی جلدی نہیں ہے۔ حکومت چاہتی ہے کہ بینکس ملک کی امنگوں کو پورا کریں۔ وزیر خزانہ نے یقین دلایاہے کہ بینکوں کے تمام موجودہ ملازمین کے مفادات کا ہر قیمت پرتحفظ کیا جائے گا۔