اسپیشل ٹرینوں کے لیے تقریباً16 کروڑ روپئے کی 45000 سے زائد ٹکٹوں کی بکنگ ہوئی

نئی دہلی:ہندوستانی ریلوے نے بتایا کہ اسپیشل ٹرینوں کے لئے ابھی تک 80 ہزار سے زائد مسافروں نے 16.15 کروڑ روپئے کی 45000 سے زائد ٹکٹوں کی بکنگ کی ہیں۔دہلی سے چھتیس گڑھ رپیٹ چھتیس گڑھ کے بلاسپور کے لئے پہلی ٹرین روانہ ہونے سے کچھ گھنٹے پہلے ریلوے نے یہ معلومات دی۔ان اسپیشل ٹرینوں کی بکنگ پیر کی شام چھ بجے شروع ہوئی تھی۔ ریلوے نے بتایا کہ ابھی تک اگلے سات دن کے لئے 16.15 کروڑ روپئے کی 45533 (پی این آر) بکنگ کی گئی ہے۔ ان ٹکٹوں پر تقریباً82317 لوگ سفر کریں گے۔ریلوے نے پیر کو 15 اسپیشل ٹرینوں کے لئے ہدایات جاری کیا تھا، جو آج منگل سے چلنا شروع ہوں گی۔مسافروں کو اپنا کھانا اور چادرلانے کو کہا گیا ہے اور طبی جانچ کرنے کے لئے ٹرین کے روانہ ہونے کے وقت سے تقریباً90 منٹ پہلے آنے کو کہا ہے۔یہ ٹرینیں نئی دہلی اور ملک کے تمام بڑے شہروں ڈبروگڑھ، اگرتلا، ہاوڑہ، پٹنہ، بلاسپور، رانچی، بھونیشور، سکندرآباد، بنگلور، چنئی، تروننت پورم، مڈگاؤں، ممبئی سینٹرل، احمد آباد اور جموں توی کے درمیان چلیں گی۔منگل کو آٹھ میں سے تین ٹرینیں نئی دہلی سے روانہ ہوں گی اور ڈبروگڑھ، بنگلور اور بلاسپورپہنچیں گی۔ہاوڑہ، راجندر نگر (پٹنہ)، بنگلور، ممبئی وسطی اور احمد آباد سے ایک ایک ٹرین روانہ ہوگی اور دہلی پہنچے گی۔پبلک ٹرانسپورٹ ریلوے نے کہا تھا کہ ان ٹرینوں میں پیشگی بکنگ زیادہ سے زیادہ سات دن کے لئے ہو گی، فی الحال آراے سی اور ویٹنگ ٹکٹ جاری نہیں ہو گا، ٹرین میں ٹی ٹی کو کسی کا ٹکٹ بنانے کی اجازت نہیں ہوگی۔ہندوستانی ریلوے نے ٹکٹ منسوخ کرنے کا بھی اختیار دیا ہے۔اس سلسلے میں اس کا کہنا ہے کہ مسافر ٹرین کی روانگی سے 24 گھنٹے پہلے تک ہی ٹکٹ منسوخ کرا سکتے ہیں لیکن ٹکٹ منسوخ ہونے پر 50 فیصد فیس کاٹ لیا جائے گا۔