سوشل میڈیاپرطالبان کی حمایت کے الزام میں 14 افراد گرفتار

 

گوہاٹی:جو طالبان سے محبت کا اظہار کرتے ہیں ،ان پر پولیس کی نظرہے۔ آسام میں 14 افراد کو سوشل میڈیا پر طالبان کی حمایت کرنے پر گرفتار کیا گیا ہے۔ ہفتہ کو پولیس نے بتایاہے کہ افغانستان میں طالبان کی حکومت کی حمایت کرنے والی مبینہ سوشل میڈیا پوسٹوں کے لیے آسام بھرسے چودہ افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔ایک سینئر پولیس افسر نے بتایاہے کہ گرفتاریاں جمعہ کی رات سے کی گئی ہیں اور ان کے خلاف انسدادغیر قانونی سرگرمی ایکٹ ، آئی ٹی ایکٹ اور سی آر پی سی کی مختلف دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ہے۔ پولیس نے بتایا کہ ہم اشتعال انگیز پوسٹوں کے لیے چوکس ہیں اور سوشل میڈیا پر نظر رکھتے ہیں۔ساتھ ہی درنگ ، کچر ، ہیلاکندی ، جنوبی سلمارا ، گولپارہ اور ہوجائی اضلاع سے ایک ایک شخص کو گرفتار کیا گیا ہے۔ڈپٹی انسپکٹرجنرل وایلیٹ بڑوا نے کہا کہ آسام پولیس سوشل میڈیا پر طالبان نواز ریمارکس کے خلاف سخت قانونی کارروائی کر رہی ہے جوقومی سلامتی کے لیے خطرناک ہیں۔ انہوں نے کہاہے کہ ہم ایسے لوگوں کے خلاف فوجداری مقدمات درج کر رہے ہیں۔ اگر ایسی کوئی بات آپ کے نوٹس میں آتی ہے تو براہ کرم پولیس کو مطلع کریں۔