شرجیل امام کی دہلی ہائی کورٹ میں درخواست،پولیس کواضافی وقت دینے کے فیصلے کوچیلنج

نئی دہلی:جواہر لال نہرو یونیورسٹی (جے این یو) کے سابق طالب علم شرجیل امام نے پیر کو دہلی ہائی کورٹ میں درخواست دائر کرکے نچلی عدالت کے اس حکم کوچیلنج کیاہے جس میں اس نے سی اے اے اور این آرسی کے خلاف مظاہرہ کے دوران مبینہ اشتعال انگیزتقریر کے سلسلے میں تفتیش مکمل کرنے کے لیے پولیس کو اور وقت دیاتھا۔ ہائی کورٹ کے سامنے یہ پٹیشن پیش کی گئی ہے اوراس کے 14 مئی کو درج کرنے کی امیدہے۔امام نے سماعت عدالت کے 25 اپریل کے حکم کو چیلنج کیاہے جس کے تحت دہلی پولیس کو غیر قانونی سرگرمی ایکٹ کے تحت درج کیس میں تفتیش مکمل کرنے کے لیے 90 دن کی مقررہ حدسے اضافی وقت کی اجازت دی گئی تھی۔ انھوں نے عدالت سے اس معاملے میں مقرر90 دن کی ڈیڈ لائن کے اندر تحقیقات نہیں پوری ہونے پر ضمانت دیئے جانے کا بھی درخواست کی۔ نچلی عدالت نے حال ہی میںدرخواست مستردکردی تھی۔