شرحِ خواندگی میں دہلی نے حاصل کیا دوسرا مقام

نئی دہلی:دہلی نے ملک میں خواندگی کی شرح میں دوسرا مقام حاصل کیا ہے۔ اس کامیابی پر نائب وزیر اعلی اور وزیر تعلیم منیش سسودیا نے اپنی حکومت کی تعلیمی ٹیم کو مبارکباد دی ہے۔ اس کامیابی کے بارے میں انہوں نے اپنے سوشل میڈیا ہینڈل کے ذریعے معلومات فراہم کی۔ انہوں نے اپنے ٹویٹ میں لکھاکہ دہلی نے شرح خواندگی کے لحاظ سے ملک میں دوسرے نمبر پر جگہ بنا لیا ہے۔ دہلی کی تعلیمی ٹیم کو مبارکباد۔ ہم 100فیصد تک پہنچنے کی کوشش کرتے رہیں گے۔ تناؤ کو کم کرنا اولین ترجیح ہونی چاہئے۔ ہر گھنٹے ایک خودکشی ناقابل قبول ہے۔تحقیق کے مطابق کیرالا کے بعد دہلی میں خواندگی کی شرح 88.7 فیصد ہے۔ اس کے بعد اتراکھنڈ کا87.6 فیصد، ہماچل پردیش کا86.6 فیصد اور آسام کا 85.9 فیصد ہے۔واضح رہے کہ خواندگی کی شرح 96.2 فیصد کے ساتھ کیرالہ ایک بار پھر ملک کی سب سے تعلیم یافتہ ریاست کے طور پر سامنے آیا ہے، جبکہ آندھرا پردیش 66.4 فیصد خواندگی کی شرح میں سب سے آخری مقام پر ہے۔وہیں راجستھان خواندگی کی شرح 69.7 فیصد کے ساتھ دوسری سب سے بدترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والی ریاست بن گئی ہے۔بہار کی شرح خواندگی 70.9 فیصد ہے، تلنگانہ میں 72.8 فیصد، اتر پردیش میں 73 فیصد اور مدھیہ پردیش میں 73.7 فیصد ہے۔ یہ معلومات این ایس او کے سروے کی بنیاد پر جاری کی گئی رپورٹ میں دی گئی ہیں۔