سپریم کورٹ نے ملک میں کووڈ 19 کی صورت حال پر تشویش کااظہارکیا

نئی دہلی:سپریم کورٹ نے کورونا وائرس کے وبا کی وجہ سے ملک میں ابتر ہوتی صورتحال پرتشویش کا اظہار کیا ہے۔ قابل غور بات یہ ہے کہ ملک میں کوویڈ 19 کے کیسز تین لاکھ 43 ہزار سے تجاوز کر چکے ہیں۔ جسٹس آر ایف نریمن نے کہاہے کہ ہر گزرتے دن کے ساتھ کوویڈ۔19 کی صورتحال بہترنہیں ہو رہی ہے بلکہ یہ اور بھی خراب ہوتا جارہا ہے۔ سپریم کورٹ نے یہ ریمارکس پنجاب کے تاجر جگجیت سنگھ چہل کی پیرول سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران کیا۔عدالت عظمیٰ نے کہاہے کہ جب کوئی پیرول پر باہر آسکتا ہے تو ، کسی کو بھری جیل میں واپس بھیجنے کا کوئی فائدہ نہیں ہے۔ اس کے ساتھ ہی ، سپریم کورٹ نے چہل کوپیرول پر رہا کرنے کافیصلہ کیا۔اہم بات یہ ہے کہ جگجیت سنگھ چاہل جگدیش بھولا منشیات کیس کا ملزم ہے۔ملک اور دنیا میں کورونا وائرس کے کیسز میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے۔منگل کے روز وزارت صحت کے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق ہندوستان میں کورونا وائرس کے مریضوں کی کل تعداد بڑھ کر 3 لاکھ 43 ہزار 90 ہوگئی ہے ۔ اس وقت ، دنیابھرمیں 8 لاکھ سے زیادہ افراد کورونا وائرس سے متاثرہیں۔