سابق نائب صدر کے بیان کی مخالفت میں اترے شیعہ عالم دین،بولے:ملک میں کوئی تعصب نہیں

نئی دہلی:شیعہ عالم دین مولانایعسوب عباس نقوی نے ویڈیوجاری کرکے سابق نائب صدرحامدانصاری کے بیان کی مذمت کی ہے۔شیعہ مذہبی رہنماکاکہنا ہے کہ ہمارے ملک میں کوئی تعصب نہیں ہے۔ ہمارا ملک اتحادکی علامت ہے۔ جہاں ہند و، مسلمان ، سکھ ، عیسائی ، یہودی اور پارسی ایک ساتھ رہتے ہیں۔ میرا ملک گلدان کی طرح ہے۔ایساسمجھاجاتاہے کہ اس کمیونٹی کے لوگوں کے بی جے پی سے قریبی تعلقات ہیں۔اب یعسوب عباس نقوی کے بیان پربھی تنقیدہورہی ہے کہ لوجہادکاڈرامہ،کوروناپرمذہبی رنگ دے کرمسلمانوں کوبدنام کرنا،سی اے اے کی منظوری،تین طلاق کے خلا ف قانون جیسے اقدامات کے باوجوداگرشیعہ عالم یہ کہتے ہیں توحیرت ہوتی ہے۔یعسوب عباس نقوی نے کہاہے کہ اگر حامد انصاری بولتے توپھر انہیں ایک فردپربات کرنی چاہیے تھی ، پورے ملک کو اس میں شامل نہیں کرناچاہیے تھا۔ جہاں ہمارے تمام ہندوؤں ، مسلمانوں اور سکھ بھائیوں نے ملک کی آزادی کے لیے اپنا لہوبہایاہے۔ حامد انصاری کہہ رہے ہیں کہ ہمارے پورے ملک میں تعصب فروغ پا رہا ہے؟ لیکن یہ ایسانہیں ہے۔ ہمارے ملک میں کوئی جنونیت نہیں ہے۔ کیونکہ یہاں ہندوؤں کادروازہ مسلمان کے دروازے سے جڑا ہوا ہے،مسلمان کا دروازہ ہندوبھائی کے دروازے سے جڑا ہوا ہے۔ یہاں رشتے داربعدمیں کھڑے ہیں،پہلے دوست اور پیارے کھڑے ہیں۔