پنجاب کے بعد اب راجستھان کانگریس میں ہلچل ، وینوگوپال پہنچے جے پور

نئی دہلی؍ جے پور:کانگریس کی پنجاب یونٹ کے تنازعہ کے حل کے بعد اب راجستھان کانگریس میں ہلچل ہے اور پارٹی کی تنظیم کے جنرل سکریٹری کے سی وینوگوپال جمعہ کو جے پور پہنچ گئے ہیں۔ذرائع نے یہ بھی بتایا کہ پارٹی کے راجستھان انچارج اجے ماکن بھی جے پور پہنچ سکتے ہیں۔پارٹی ذرائع نے بتایا کہ کابینہ میں ردوبدل اور توسیع کی قیاس آرائیوں کے درمیان کانگریس کے دونوں سینئر رہنما راجستھان پہنچے ہیں۔ خیال کیا جارہا ہے کہ اشوک گہلوت کابینہ میں ردوبدل اور توسیع اسی ماہ ہونے کا امکان ہے۔دوسری طرف جے پور میں چیف منسٹر آفس کے ذرائع نے آگاہ کیاکہ فی الحال گہلوت کے پاس دہلی جانے کا کوئی پروگرام نہیں ہے۔ وہ ایک دو دن کہیں بھی نہیں جائیںگے ۔وینگوپال کی گہلوت سے ممکنہ ملاقات کے بارے میں انہوں نے کہا کہ ہمیں ابھی تک کانگریس کے جنرل سکریٹری کا باضابطہ پروگرام نہیں ملا ہے۔یہ خیال کیا جاتا ہے کہ اجے ماکن اور وینوگوپال کی گہلوت سے ملاقات کے بعد ریاست میں کابینہ میں توسیع کا راستہ صاف ہوسکتا ہے۔کانگریس ذرائع کا کہنا ہے کہ پنجاب کے مسئلے کے حل کے بعد اب سونیا گاندھی، پرینکا گاندھی اور راہل گاندھی کی پوری توجہ راجستھان پر ہے ۔