پروفیسر مناظر عاشق ہرگانوی نے ہر صنف میں غیرمعمولی خدمت انجام دی ہے:ڈاکٹر شیخ عقیل احمد

قومی اردو کونسل میں ڈاکٹرمحی الدین زور کشمیری کی کتاب’مناظر عاشق ہرگانوی کی ڈراما شناسی‘کا اجرا

نئی دہلی:مناظرعاشق ہرگانوی ہمارے دور کے ایسے مصنّفین میں سے ہیں جنھوں نے ادب کی ہر صنف میں غیر معمولی خدمت انجام دی ہے اور اب تک ان کی دوسو سے زائد کتابیں منظر عام پر آکر ادبی حلقوں میں مقبولیت حاصل کرچکی ہیں،ان کی تحقیقی و تنقیدی سرگرمیوں کا سلسلہ اب بھی پوری آب و تاب کے ساتھ جاری ہے۔ ان خیالات کا اظہار قومی اردو کونسل کے ڈائرکٹر شیخ عقیل احمد نے ڈاکٹر محی الدین زور کشمیری کی مؤلفہ کتاب’مناظر عاشق ہرگانوی کی ڈراما شناسی‘کے اجرا کے موقعے پر کیا۔ اجرا کی یہ تقریب کونسل کے صدر دفتر میں منعقد ہوئی تھی۔ شیخ عقیل احمد نے کہا کہ مناظرعاشق ہرگانوی اپنی کثرتِ تصانیف کے سبب تمام اردو حلقوں میں معروف و متعارف ہیں اور پوری اردو دنیا میں ان کی تحریروں سے استفادہ کرنے والے پائے جاتے ہیں۔ تحقیق،تنقید،سوانح،ترجمہ،شاعری اور دیگر تمام ادبی شعبوں میں ہرگانوی صاحب کی ناقابل فراموش خدمات ہیں اور یہی وجہ ہے کہ ان کی زندگی میں ہی ان کے فکر و فن کی تفہیم و شناخت کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے اور اب تک ان پر کئی کتابیں مرتب کی جاچکی ہیں،اسی سلسلے کی تازہ کڑی ڈاکٹر محی الدین قادری زور کی تالیف ‘مناظر عاشق ہرگانوی کی ڈراما شناسی‘ہے جس میں مؤلف نے ہرگانوی صاحب کی ڈراما نگاری کا تجزیہ کرتے ہوئے ڈرامے سے متعلق ان کے تنقیدی و تحقیقی مضامین کو جمع کردیا ہے۔ یہ کتاب ہرگانوی صاحب کی ڈراما نگاری و ڈراما شناسی دونوں حوالوں سے اہمیت کی حامل ہے۔ اس موقعے پر معروف ادیب و ناقد حقانی القاسمی نے اظہار خیال کرتے ہوئے مناظر عاشق ہرگانوی کو ہمہ جہت شخصیت قرار دیا اور کہا کہ وہ ایک وسیع النظر ادیب و قلمکار ہیں جنھوں نے تمام اصنافِ اردو کو اپنے نتائجِ افکار سے مالامال کیا ہے۔ کتاب کے مؤلف ڈاکٹر محی الدین قادری زور نے اپنی کتاب کا تعارف کرواتے ہوئے کونسل کے ڈائرکٹر شیخ عقیل احمد کا خصوصی شکریہ ادا کیا۔ اس موقعے پرڈاکٹرعبدالرشید اعظمی،ڈاکٹر یوسف رامپوری،محمد زید اور ماعز القادری وغیرہ موجود تھے۔