پرینکاگاندھی نے نوجوانوں سے روزگار کے معاملے پر بات کی،کہا:کانٹریکٹ پالیسی کے خلاف سڑک پراتریں گے

نئی دہلی:کانگریس کی جنرل سکریٹری پرینکا گاندھی واڈرا نے جمعرات کے روز روزگار کے معاملے پر نوجوانوں کے ساتھ ڈیجیٹل بات چیت کی اور کہا کہ اتر پردیش میں کانٹریکٹ پالیسی کے خلاف سڑک پر آواز اٹھائی جائے گی۔ پارٹی کی جانب سے جاری بیان کے مطابق پرینکا نے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے 2016 سے ٹیچر تقرریوں کے 12460 امیدواروں سے بات چیت کی۔ یہ گفتگو پرینکا گاندھی کے ذریعہ نوجوانوں کے ساتھ روزگار کے بارے میں حال ہی میں شروع کی گئی گفتگو کا ایک حصہ ہے۔ اس مکالمے کے دوران پرینکاگاندھی کاکہناتھاکہ ہمیں نوجوانوں کی بات سننی ہوگی اور ان کے معاملات کے لئے ہمیں گھروںسے سڑک تک لڑنا ہوگا۔کانگریس پارٹی اس میں پیچھے نہیں ہٹے گی۔کانگریس کا دعویٰ ہے کہ 2016 میں ٹیچر بھرتی اشتہار کے 51 اضلاع میں عہدے تھے لیکن 24 اضلاع میں خالی جگہیں صفر تھیں۔ پچھلے 3 سالوں سے امیدوار عدالت کے چکر لگارہے ہیں۔ پارٹی کے مطابق امیدواروں نے پرینکا گاندھی کو اپنے دکھوں سے آگاہ کیاہے۔ پرینکا نے وعدہ کیا ہےکہ وہ ہر ممکن مدد کریں گی۔ انہوں نے یہ بھی کہاکہ یہ ہمارے لئے سیاسی مسئلہ نہیں ہے بلکہ انسانی جذبات کا معاملہ ہے،یہ انصاف کا سوال ہے۔ انہوں نے کہاکہ یہ کالا قانون ہے۔ اس کے خلاف سڑک پر اترا جائے گا، ہم ایک ایسی پالیسی لائیں گے جس میںکانٹریکٹ نوجوانوں کی توہین نہ ہو۔