پاکستانی تیزگیندبازمحمد عامر نے28 سال کی عمر میں انٹرنیشنل کرکٹ کو الوداع کہہ دیا

 

کراچی :پاکستان کرکٹ ٹیم کے تیزگیندباز محمد عامر نے حیران کن فیصلہ کیا ہے۔ عامر نے انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا ہے۔ اس سے قبل وہ گزشتہ سال ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ لے چکے ہیں۔ تاہم وہ غیر ملکی لیگ میں کھیلنا جاری رکھیں گے، لیکن وہ پاکستان ٹیم کے لئے نہیں کھیلیں گے۔محمد عامر نے گزشتہ سال ورلڈ کپ کے بعد ٹیسٹ کرکٹ کو الوداع کہا تھا۔ اس وقت سے انہیں زیادہ موقع نہیں ملا ہے۔ پاکستان کرکٹ بورڈ اور ٹیم کے ہیڈ کوچ مصباح الحق سمیت تمام پاکستانی سینئر کھلاڑی چاہتے تھے کہ محمد عامر پاکستان کے لئے ٹیسٹ کرکٹ کھیلنا جاری رکھیں کیونکہ پاکستانی ٹیم آئی سی سی ورلڈ ٹیسٹ چمپئن شپ کھیل رہی ہے۔محمد عامر نے گذشتہ سال اکتوبر میں ون ڈے کرکٹ میں حصہ لیا تھا۔ اس کے علاوہ رواں سال اگست میں محمد عامر نے دورہ انگلینڈ میں آخری ٹی ٹونٹی انٹرنیشنل میچ کھیلا تھا۔ 6 سال کی پابندی جھیلنے والے محمد عامر اب محدود اوورز کی کرکٹ کو الوداع کہنے والے ہیں ،تاہم محمد عامر اور پاکستان کرکٹ بورڈ نے ابھی تک اس کی تصدیق نہیں کی ہے۔ ورلڈ کپ 2019 کے بعد یہ اطلاعات موصول ہوئی تھیں کہ محمد عامر پاکستان کے لئے ٹیسٹ کرکٹ نہیں کھیلیں گے اور جلد ہی وہ محدود اوورز کی کرکٹ سے سبکدوش ہوجائیں گے۔ اس کی وجہ یہ تھی کہ وہ انگلینڈ کے لئے کرکٹ کھیلنا چاہتے ہیں، کیونکہ ان کی اہلیہ انگلینڈ کی ہیں۔ تاہم جب وہ ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائر ہوئے تو ان کی اہلیہ نے کہا کہ وہ پاکستان کے لئے کرکٹ کھیلنا جاری رکھیں گے۔تاہم ذرائع کے مطابق محمد عامر نے انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائرمنٹ لے لیا ہے۔ دورہ نیوزی لینڈ کے لیے بھی محمد عامر کو پاکستان کی ٹی ٹونٹی ٹیم میں شامل نہیں کیا گیا ہے۔ عامر غیر ملکی لیگ میں کھیلتے رہیں گے۔ اس کی تصدیق ان کے آخری ٹویٹ سے ہوئی ہے، جس میں انہوں نے ابوظہبی ٹی 10 لیگ میں کھیلنے کی تصدیق کی ہے۔

    Leave Your Comment

    Your email address will not be published.*