آکسیجن کے لیے پارلیمانی کمیٹی نے پہلے ہی خبردارکیاتھاپھر بھی حکومت نے توجہ نہیں دی

نئی دہلی:کرونا وائرس کی وبا ملک میں تباہی مچا رہی ہے۔ ملک بھر سے آکسیجن ، بستر ، وینٹیلیٹر کی کمی کی اطلاعات ہیں۔ مریضوں کی زندگی دم توڑ رہی ہے ، جبکہ سیاست میں بھی شدت آگئی ہے۔ کانگریس نے قومی دارالحکومت میں بگڑتی ہوئی صورتحال کے لیے مرکز اور دہلی دونوں حکومتوں پر حملہ کیا ہے۔ کانگریس کے ترجمان اجے ماکن نے مرکز اور دہلی حکومت پر الزام لگایا ہے کہ وہ لوگوں کی توجہ اپنی ناکامی سے ہٹانے کی کوشش کر رہے ہیں۔اجے ماکن نے پارلیمانی پینل کی جانب سے حکومت کو پیش کی گئی ایک رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے کہاہے کہ فروری میں ایوان میں پیش کی جانے والی اس رپورٹ میں پینل نے حکومت کو اسپتالوں میں آکسیجن کی فراہمی کو یقینی بنانے کی سفارش کی تھی۔ انہوں نے الزام لگایاہے کہ بڑھتے ہوئے کورونا کیس کی وجہ سے آکسیجن کی کمی کی وجہ سے اسپتالوں میں پیدا ہونے والی ہنگامی صورتحال سے بچا جاسکتا ہے۔ اگر حکومت ابتدائی وارننگوں کو سنجیدگی سے لیتی۔کانگریس کے ترجمان اجے اماکن نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاہے کہ دہلی کے لیے منظور شدہ آکسیجن میں سے کجریوال حکومت صرف ایک سیٹ کر سکتی ہے۔انہوں نے بجٹ اجلاس کے دوران 2 فروری کو پارلیمنٹ میں پیش کی جانے والی پارلیمانی پینل کی تیار کردہ رپورٹ کاحوالہ دیاہے۔