نتیشور کالج،مظفرپور کے زیر اہتمام آن لائن کوئز کا انعقاد

اردو کے استاد کامران غنی صبا کو آن لائن استقبالیہ
مظفرپور،28مئی(پریس ریلیز) کورونا وائرس سے اس وقت پوری دنیا دہشت زدہ ہے۔ ہمارے ملک میں بھی اس بیماری کے اثرات بڑھنے لگے ہیں۔ اس وبا سے بچنے کا سب سے بہتر اور موثر طریقہ احتیاطی تدابیر ہیں۔اس لیے اس وبا سے محفوظ رہنے کے لیے سماجی بیداری کی سب سے زیادہ ضرورت ہے۔اسی مقصد کے پیش نظر نتیشور کالج، مظفرپور کے شعبۂ کیمیا کے زیر اہتمام کوویڈ 19 وبا پر آن لائن بیداری کوئز اور بیداری پروگرام کا انعقاد کیا گیا ۔جس میں ملک و بیرون ملک کے تقریباً ایک ہزار افراد نے حصہ لیا۔ جن میں طلبہ و طالبات، ریسرچ اسکالرز، اساتذہ کے علاوہ عوام نے بھی بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔ کالج کے پرنسپل ڈاکٹر منوج کمار اور آرگنائزنگ سکریٹری ڈاکٹر ابھے نندا شریواستو نے بتایا کہ ڈجیٹل ذرائع کا استعمال کر کے علم و آگہی کی شمع کو ملک و بیرون ملک کے کسی بھی حصہ میں پہنچایا جا سکتا ہے۔واضح رہے کہ اس کوئز مقابلہ اور کورونا بیداری پروگرام کے لیے گوگل پلیٹ فارم کا استعمال کیا گیا۔ جس میں تقریباً ایک ہزار لوگوں نے حصہ لیا۔ جنہیں ای سرٹیفکٹ بھی دی گئی۔کالج کے پرنسپل ڈاکٹر منوج کمار نے سبھی اساتذہ کو اس طریقے کے مقابلے اورآن لائن سرگرمیوںکے انعقاد کے لیے آگے آنے کی اپیل کی ہے، ساتھ ہی انہوں نے طلبہ و طالبات کو بھی صلاح دی کہ وہ اس طرح کی سرگرمیوں میں حصہ لیں اور سماج میں مثبت تبدیلی لانے میں اپنا کردار ادا کریں۔کالج کی طرف سے شعبۂ اردو میں نئی ذمہ داری سنبھالنے پر اسسٹنٹ پروفیسر کامران غنی صبا کو آن لائن استقبالیہ بھی دیا گیا۔پرنسپل ڈاکٹر منوج کمار نے امید ظاہر کی کہ کامران غنی صبا محنت اور ایمانداری کے ساتھ اپنے تدریسی فرائض انجام دیں گے۔ ڈاکٹر این آر پرکاش، ڈاکٹر کماری سروج، ڈاکٹر نوا شرما، ڈاکٹر سومیا سرکار،امرجیت سنگھ،ڈاکٹر روی رنجن، ڈاکٹر ابھے نندا سری واستو،اندرانی رائے،ڈاکٹر راکھی تیواری، ڈاکٹر نیتو سنگھ، ڈاکٹر سریتا کماری، آریہ پریا، للن کماری سمت کالج کے سبھی اسٹاف نے کامران غنی صبا کو ان کی جوائننگ پر مبارکباد پیش کی۔