نئے سی بی آئی سربراہ اجیت ڈوبھال کے قریبی

نئی دہلی: سبودھ جیسوال ، جو سنٹرل انڈسٹریل سیکیورٹی فورس (سی آئی ایس ایف) کے سربراہ ہیں ، کو مرکزی تفتیشی ایجنسی سی بی آئی کی کمان سونپی گئی ہے۔ ان کی مدت 2 سال ہوگی۔ مہاراشٹر کے ڈی جی پی سبودھ جیسوال کو پولیس دائرے میں قومی سلامتی کے مشیر اجیت ڈوبھال کا قریبی سمجھا جاتا ہے۔نوبھارت ٹائمزنے بتایاہے کہ’دی ویک‘کی رپورٹ کے مطابق جب سے انہیں مہاراشٹر سے ڈیپوٹیشن پر مرکز لایا گیا ہے ، پولیس دائرے میں یہ قیاس آرائیاں جاری تھیں کہ وہ کسی بڑی ذمہ داری کے لیے تیارہیں۔’دی ویک‘ کی ایک رپورٹ نے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ جیسوال کو پہلے دہلی پولیس کمشنر کی ذمہ داری سونپی جاتی تھی لیکن ذرائع کے مطابق قومی دارالحکومت میں پولیس پر سیاسی آتش زنی کے سبب وہ اس عہدے سے دلچسپی نہیں رکھتے تھے۔ اسی وجہ سے ، انہیں سی آئی ایس ایف کے سربراہ کی ذمہ داری سونپی گئی۔جیسوال کو 2018 میں مہاراشٹر کا ڈی جی پی بنایا گیا تھا۔ اس وقت انڈین ایکسپریس کی ایک رپورٹ میں ذرائع کے حوالے سے بتایا گیا ہے کہ ان کی بطور ڈی جی پی تقرری این ایس اے ڈوبھال سے بات چیت کے بعد کی گئی تھی۔ کچھ ماہ قبل انہیں مرکزی عہدے پر لایا گیا تھا۔ خیال کیا جاتا ہے کہ این ایس اے ڈوبھال نے بھی اس میں ایک اہم کردار ادا کیا ہے۔ ٹائمز آف انڈیا کی ایک رپورٹ کے مطابق جیسوال ، جو مہاراشٹر کے ڈی جی پی تھے ، ریاست کی نئی سیاسی قیادت کے ساتھ کام کرنے میں بے چینی محسوس کررہے تھے اور وہ مرکزی ڈیپوٹیشن تلاش کررہے تھے۔ مہاوکاس اگھاڑی حکومت کے ساتھ پٹری پر واپس نہیں آسکے۔ اطلاعات کے مطابق آئی ایس ایس کے سینئر افسران کی پوسٹنگ اور تبادلے کی وجہ سے جیسوال اورادھوحکومت میں دراڑیں بڑھ گئیں۔