مسلم یونیورسٹی علی گڑھ، دارالعلوم دیوبنداور جامعہ کو بم سے اڑادیناچاہیے،نرسنگھا نند سرسوتی کی معروف مسلم اداروں کے خلاف زہر افشانی

نئی دہلی(نازش ہما قاسمی): اسلام اور مسلمانوں کے خلاف نفرت انگیزی میں مشہور نام نہاد سوامی یتی نرسمہا نند سرسوتی نے اپنے ایک حالیہ بیان میں ملک کے معروف مسلم تعلیمی اداروں کا نام لے کر کہا ہے کہ انھیں بمباری کرکے تباہ کر دیا جائے۔ نفرت کے سوداگر سوامی نے خاص طور سے علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کے خلاف خوب زہر اگلا۔گذشتہ ہفتے علی گڑھ میں ایک پریس کانفرنس میں کی گئی اس کی تقریر کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہورہی ہے ۔جس میں وہ کہہ رہا ہے کہ ’اے ایم یو مسلسل ملک دشمن اور انسانیت دشمن عناصر تیار کررہا ہے،یہ تو سرکاریں کمزور ہیں اگر کسی دن کوئی ’مرد‘دہلی کی گدی پر بیٹھا تو اسے سب سے پہلے دارالعلوم دیوبند، علی گڑھ مسلم یونیورسٹی اور پھر جامعہ ملیہ اسلامیہ دہلی کوختم کرناہوگا۔پہلے ہی دن ان تینوں کو تباہ کردینا چاہیے،تبھی یہ ملک خوشحال ہوسکتا ہے‘۔