نئی تعلیمی پالیسی طلبا کے لیے مفید اور کارآمد ثابت ہوگی:طارق منصور

علی گڑھ:علی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو) ملاپورم سنٹر نے نئی تعلیمی پالیسی پر ایک دو روزہ قومی ویبینار کا اہتمام کیا جس سے خطاب کرتے ہوئے وائس چانسلر پروفیسر طارق منصور نے پالیسی کی جم کرقصیدہ خوانی کرتے ہوئے کہاہے کہ مستقبل کی نسلوں کے لیے نئی تعلیمی پالیسی بہت مفید اور کارآمد ثابت ہوگی۔ انھوں نے کہا کہ نئی تعلیمی پالیسی پر ملک کے ماہرین تعلیم وسیع پیمانہ پر تبادلۂ خیال کررہے ہیں اور کانفرنسوں و سیمیناروں کا انعقاد ہورہا ہے۔ وائس چانسلر نے امید ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ نئی تعلیمی پالیسی کے مثبت اثرات کچھ برسوں بعد نظر آئیں گے۔ ڈاکٹر شکیلہ ٹی شمسو (سابق او ایس ڈی، این ای پی 2020) نے تعلیمی پالیسی کے متعدد مثبت پہلوؤں پر روشنی ڈالی۔ پروفیسر ایم شکیل احمد صمدانی (کوآرڈنیٹر، اے ایم یوسینٹرس)، پروفیسر نسرین (صدر، شعبۂ تعلیم، اے ایم یو) اور پروفیسر محمد پرویز (سابق صدر، شعبۂ تعلیم) پروگرام میں شریک ہوئے۔ ڈاکٹر فیصل کے پی (ڈائریکٹر، اے ایم یو ملاپورم سنٹر) نے پروگرام کی صدارت کی جب کہ ڈاکٹر محمد بشیر کے (کوآرڈنیٹر، شعبۂ تعلیم، اے ایم یو ملاپورم) نے خطبۂ استقبالیہ پیش کیا۔ کنوینر مسٹر نصیر علی ایم کے نے اظہار تشکر کیا۔ ویبینار میں شرکت کے لئے ملک کے مختلف خطوں سے 1500 لوگوں نے رجسٹریشن کرایا تھا۔