ممبئی:بی ایم سی نے وصول کیا کوروناقوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں سے 10 کروڑ جرمانہ،اب لوگوں کومفت ماسک تقسیم کیے جائیں گے

ممبئی:عوامی مقامات پر ماسک نہ پہننے پر لوگوں سے بطور جرمانہ 10 کروڑ روپئے وصول کرنے کے بعد بی ایم سی نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ اس رقم سے لوگوں میں ماسک تقسیم کرے گی۔ بی ایم سی کے کمشنر اقبال سنگھ چہل نے کہا کہ مشق کے لئے مقرر کردہ مارشلوں کو دی جانے والی رقم کی کٹوتی کے بعد بی ایم سی کے پاس تقریبا 5 5 کروڑ روپئے ہیں یہ رقم لوگوں کو واپس کرنی ہوگی۔ ان کا مزید کہنا ہے کہ اس کا مقصد شہریوں سے رقم اکٹھا کرنا نہیں ہے بلکہ انہیں آگاہ کرنا ہے۔ لہٰذا یہ فیصلہ کیا گیا ہے کہ جمع کی گئی رقم ماسک تقسیم کرنے کے لئے خرچ کی جائے گی۔بی ایم سی چیف نے بتایا کہ ماسک پہلے ہی خریدا جاچکا ہے اور اورہر ایک پر بی ایم سی کا خرچ 5 روپئے ہوگا ۔ ماسک اور دیگر ضروری اشیاء پہلے ہی ان تمام مراکز میں مہیا کی جارہی ہیں جہاں کوویڈ مریضوں کا علاج کیا جارہا ہے۔ بی ایم سی پہلے ہی سرحدی جنگجوؤں کو ماسک دے رہی تھی اور اب شہریوں کو بھی ماسک ملیں گے۔اس پر زور دیتے ہوئے کہ شہری ادارے اپنی توانائیاں بیداری مہم پر مرکوز کررہی ہے، بی ایم سی کمشنر نے مزید کہا کہ بی ایم سی اتنے بڑے پیمانے پر اس طرح کی مشق کرنے والی پہلی شہری تنظیم ہوگی۔ انہوں نے مزید کہا کہ میں نے محسوس کیا کہ یہ بہترین چیزہے۔ بہت سارے غریب لوگ بھی ہوں گے جو ماسک نہیں خرید پائیں گے۔ لہٰذا ہماری بیداری مہم کے تحت آئندہ دنوں میں کروڑوں ماسک مفت تقسیم کیے جائیں گے تاکہ وہ عوامی مقامات پر ماسک پہننے کی اہمیت کو سمجھ سکیں۔