مختار انصاری پرشکنجہ سخت، تین لائسنس معطل

لکھنو:اترپردیش میں حکومت ان دنوں آپریشن کلین چلا رہی ہے۔ کانپور کے گینگسٹر وکاس دوبے کے مبینہ انکائونٹرکے بعداب انتظامیہ کی توجہ مختارانصاری پرہے ۔اترپردیش کے پورانچل میں اسمبلی حلقہ سے مختار انصاری پرشکنجہ سخت کیاجارہاہے۔جیل مختار انصاری اور ان کے گروہ کے مبینہ زیر قبضہ اراضی سے قبضہ ختم کرنے کی مہم تیز ہوگئی ہے۔ اسی وقت اب غازی پور ضلعی انتظامیہ نے مختار انصاری کے تین ساتھیوں اور لواحقین کے اسلحہ لائسنس معطل کردیئے ہیں۔ مختار انصاری کے وہ اسلحہ ، جن کااسلحہ لائسنس معطل کردیا گیا ہے ، ان کو اپنے تھانے میں جمع کرا دیاگیاہے۔معلومات کے مطابق غازی پور کے ضلعی مجسٹریٹ نے مختار انصاری سے وابستہ 3 ساتھیوں اور لواحقین کے اسلحہ لائسنس کومنسوخ کردیا۔ ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ نے یہ کارروائی غازی پور پولیس اسٹیشن کے انچارج انسپکٹر کی ایک رپورٹ کی بنیادپرکی ہے جس میں اسلحہ اور گولہ بارود کی تصدیق میں بے ضابطگیوں کاذکرکیاگیاتھا۔