ایم پی ورون گاندھی کے پھر بگڑے بول،مدد مانگنے والے سے کہا:میں تیرے باپ کا نوکر نہیں

پیلی بھیت:بی جے پی کے پیلی بھیت سے ممبر پارلیمنٹ ورون گاندھی کی ایک آڈیو وائرل ہو رہی ہے۔ اس میں رات کے ساڑھے نو بجے ایک نوجوان نے ایم پی ورون گاندھی کو فون کیا اور مدد مانگی، لیکن رکن پارلیمنٹ نے اسے ڈانٹا اور کہا کہ میں تیرے باپ کا نوکر نہیں ہوں۔ خیال رہے کہ حزب مخالف نے 1 منٹ اور 24 سیکنڈ کی آڈیو کلپ کو وائرل کردیا ، لیکن وہیں ورون کے حامیوں نے ایک ویڈیو بھی جاری کی ہے ، جس میں کال کرنے والا پولیس کی تحویل میں ہے۔ اسے پولیس نے ایک پرویژن اسٹور پر شراب فروخت کرتے ہوئے پکڑاگیا تھا۔ حامی یہ کہہ رہے ہیں کہ ورون گاندھی نے کبھی بھی غلط کام کرنے والوں کی حمایت نہیں کی اور نہ ہی پولیس کو سفارش کی۔ خیال رہے کہ ہم اس کی تصدیق نہیں کرسکتے ۔ وائرل آڈیو میں ایک طرف ورون گاندھی کی آواز ہے اور دوسری طرف سناگڑھی پولیس اسٹیشن کے تحت نوگاؤں کے رہنے والے سرویش کی آواز۔ وہ اپنے گھر میں پروویژن اسٹور چلاتا ہے۔ اتوار کے روز پولیس نے چھاپہ مارا اور دکان سے 20 بوتل دیسی شراب برآمد کی۔ پولیس نے اسے حراست میں لیا تھا، تاہم انہیں 20 ہزار کے بانڈ پر رہا کیا گیا تھا۔سرویش نے رکن پارلیمنٹ ورون گاندھی کو مدد کے لئے بلایا اور رات 9.30 بجے اپنا تعارف کرایا۔ اس دوران ورون گاندھی کو نہایت پر سکون لہجے میں بات کرتے ہوئے سنا جاسکتا ہے۔لیکن ایک موقع پر اس نے کہا کہ صبح بات کرنا ، میں رات کو بات نہیں کرتا ،میں تمہارے باپ کا نوکر نہیں ہوں۔اس پر سرویش نے کہا کہ:’ آپ ہمارے رکن پارلیمنٹ ہیں ، اگر ہم آپ سے اپنے مسائل عرض نہ کریں، تو پھر کس سے کریں‘؟ اس کے بعد ورون نے پوچھا کہ کیا پولیس آپ کو پکڑنے آرہی ہے؟ اس کے بعد سرویش نے فون منقطع کردیا۔خیال رہے کہ ورون گاندھی فی الحال پیلی بھیت سے ایم پی ہیں۔ 2009 میں وہ پہلی بار ایم پی منتخب ہوئے تھے۔ 2009 اور 2014 میں ، وہ سلطان پور کے رکن پارلیمنٹ تھے۔