موہن بھاگوت کادورۂ بھوپال،دگوجے سنگھ کا طنز: بھاگوت جی بی جے پی لیڈران کی بدعنوانیوں کی تفتیش کرنی چاہیے

بھوپال:راشٹریہ سویم سیوک سنگھ کے سربراہ موہن بھاگوت بھوپال میں ہیں۔ وہ یہاں سنگھ کی کور کمیٹی ممبروں کے ساتھ بات کریں گے۔ بھاگوت کل رات بھوپال پہنچے۔ ان کے ہمراہ سریش بھیاجی جوشی بھی ہیں۔ بھاگوت یہاں پانچ دن قیام کریں گے۔ اسی دوران کانگریس کے سینئرلیڈر اورسابق وزیراعلیٰ نے کہاہے کہ سنگھ سربراہ کو وزیراعلیٰ شیوراج سنگھ چوہان اوروزراء کی انٹلیجنس رپورٹ لینی چاہیے۔دگ وجے نے ایک اورٹویٹ کیاہے کہ مدھیہ پردیش میں ممبران اسمبلی کی خریدوفروخت کے بارے میں بھی جانناضروری ہے۔تیسرے ٹویٹ میں انھوں نے کہاہے کہ ہم جو سناتن دھرم کی پیروی کرتے ہیں اس بات پر مودی جی کو اعتراض ہے۔ آپ نے رامانڈی فرقے کے کوئی سندیافتہ شنکراچاریہ اورمذہبی رہنماکوشیلا نیاس میں نہیں رکھا۔ مودی جی کی سہولت کے ساتھ سنگ بنیادکی تاریخ بھی طے کی گئی ہے۔ کیایہ اچھاوقت ہے؟