مودی سرکار کی معاشی پالیسیوں کے خلاف آر ایس ایس کی تنظیم سڑک پراتری

نئی دہلی:راشٹریہ سویم سیوک سنگھ سے وابستہ ’’بھارتیہ مزدورسنگھ‘‘ نے مودی حکومت کی معاشی اصلاحات کے معاملے پراحتجاج کی دھمکی دی ہے۔اس کے ہزاروں کارکنوں نے ملک کے مختلف شعبوں میں مودی حکومت کی نجی کاری ، کارپوریشن اور انویسٹمنٹ کی پالیسی کے خلاف احتجاج کیا اور رول بیک کا مطالبہ کیا۔سنگھ پریوار میں اہم معاشی اصلاحات کے معاملے پر ، اندرونی تعطل واضح طورپرسامنے آیاہے۔ بھارتیہ مزدور سنگھ ، راشٹریہ سویم سیوک سنگھ کے ہزاروں کارکنان سڑکوں پر آئے اورانہوں نے مودی حکومت پر مزدوروں کے مفادات کے خلاف پالیسیاں بنانے کا الزام عائد کیا اور مطالبہ کیاہے کہ وزیر خزانہ نرملاسیتارامن نے عوامی شعبے کے یونٹوں کی نجی کاری اور عدم سرمایہ کاری کا اعلان کیاہے، اسے فوری طور پر واپس لیاجائے۔مزدور یونین کے زونل سکریٹری ، پون کمار نے بتایاہے کہ اگرمودی حکومت ان فیصلوں (نجی کاری ، کارپوریٹیشن اورسرمایہ کاری) کو واپس نہیں لیتی ہے تو بھارتیہ مزدور سنگھ اس سے بھی سخت فیصلے کرے گا۔