مودی کابینہ سے استعفا دینے والی ہرسمرت کور نے صدر سے کی اپیل:کسانوں کی آواز سنیں

نئی دہلی:کسان بل پر کسانوں کے عدم اطمینان کی وجہ سے مرکز کی این ڈی اے حکومت میں کابینہ وزیر کے عہدے سے استعفیٰ دینے والی ہرسمرت کور نے صدر رام ناتھ کووند سے اپیل کی ہے۔ کور نے منگل کو ایک ٹویٹ میں صدر سے بلوں پر دستخط کیے بغیر لوٹانے کی اپیل کی ہے۔مودی سرکار میں فوڈ پروسیسنگ کی سابق وزیر ہرسمرت کور نے اپنے ٹویٹ میں لکھاکہ اکالی دل کے بعد اب کسان بلوں کو واپس لینے کے لئے 18 اپوزیشن جماعتیں صدر کے پاس پہنچ گئی ہیں۔ یہ وقت کی ضرورت ہے۔ میں صدر کووند جی سے گزارش کرتی ہوں کہ وہ کسانوںکی آواز سنیں اور مرکزی حکومت سے ان بلوں پر اٹھائے گئے سوالات پر بات کرنے کو کہیں۔واضح رہے کہ ہرسمرت کور نے گذشتہ ہفتے اپنے کابینہ کے وزیر کے عہدے سے استعفیٰ دے دیا تھا۔ پنجاب اور ہریانہ میں کسانوں کا احتجاج طویل وقت سے ان بلوں کے خلاف چل رہا ہے ۔اسی مہینے میں پولیس نے کسانوں پر لاٹھی بھی برسائی ، جس کے بعد کسانوں کی ناراضگی مزیدبڑھ گئی ۔ کسانوں کے احتجاج سے اکالی دل دباؤ میں آگئی، جس کے بعد سکھبیر بادل نے مودی سرکار کے ان بلوں کی کھل کر مخالفت کرنا شروع کردی۔ انہوں نے کہا کہ کابینہ میں تجویز لاتے ہوئے ان کی پارٹی سے مشورہ نہیں لیا گیا۔ لوک سبھا میں بل کی منظوری کے خلاف احتجاجاً ہرسمرت کور نے استعفیٰ دے دیا۔