میوہ لال کے استعفیٰ پرتیجسوی یادونتیش کمارپرحملہ آور،ہم 19لاکھ روزگارپربھی ملیں گے

نئی دہلی:بہارکے نئے وزیرتعلیم میوہ لال چودھری کے استعفیٰ دینے کے بعد حزب اختلاف راشٹریہ جنتا دل کے لیڈرتیجسوی یادونے وزیراعلیٰ نتیش کمار پر شدید حملہ کیا ہے۔ عہدے کا حلف اٹھانے کے تین دن کے اندر بہار کے نئے وزیر تعلیم میوہ لال چودھری نے جمعرات کواستعفیٰ دے دیا ہے ، جس کے بعد اپوزیشن پارٹی کو نتیش پر حملہ کرنے کا ایک اور موقع ملا ہے۔تیجسوی یادونے طنزکیاہے کہ نتیش کمار کی سوچنے سمجھنے کی صلاحیت ختم ہوگئی ہے ، لہٰذاآر جے ڈی کا کام ہے کہ وہ انہیں ان کی کرپٹ پالیسیوں سے متنبہ کرے۔ انہوں نے ایک ٹویٹ میں لکھاہے کہ وزیراعلیٰ ، مینڈیٹ کے ذریعے ، بہار نے ہمیں آپ کی بدعنوان پالیسی، منشا اور حکمرانی کے خلاف آپ کو متنبہ کرنے کا حکم دیا ہے۔ محض استعفیٰ دینے سے کوئی فائدہ نہیں ہوگا۔ ابھی ، 19 لاکھ نوکریوں ، معاہدوں اور یکساں تنخواہ پرملیں گے۔تیجسوی نے ایک اورٹویٹ میں لکھاہیے کہ میں نے کہا تھا کہ آپ تھکے ہوئے ہیں ، لہٰذا آپ کی سوچنے سمجھنے کی طاقت کو کم کردیا گیا ہے۔ جان بوجھ کر بدعنوانوں کو وزیر بنا دیا۔ہار کے باوجود اقتدارسنبھال لیا ، گھنٹوں کے بعد استعفیٰ کا ڈرامہ رچایا۔ آپ اصل مجرم ہیں۔ آپ نے وزیر کیوں بنایا؟