میٹرو مین کی وجہ سے کیرل الیکشن پر کوئی خاص اثرنہیں پڑے گا:ششی تھرور

نئی دہلی:کانگریس کے ممبر پارلیمنٹ ششی تھرور نے میٹرو مین ای سریدھرن کے بی جے پی میں شامل ہونے پر اپنا ردعمل دیاہے۔ششی تھرور نے کہاہے کہ کیرالہ اسمبلی انتخابات میں اس کا اثر بہت معمولی ہوگا۔ بی جے پی کیرل کی کچھ سیٹوں کے سوا مقابلہ میں نہیں ہے۔ کیرالا سے تعلق رکھنے والے کانگریس لیڈر ششی تھرور نے کہاہے کہ بی جے پی کے لیے ریاست میں اپنی سابقہ کارکردگی سے بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرنا مشکل ہوگا۔ گذشتہ انتخابات میں بی جے پی نے ایک نشست حاصل کی تھی۔ انہوں نے کہا کہ سریدھرن کے سیاست میں آنے کا سب سے بڑا اثر یہ ہوگا کہ انہوں نے بی جے پی میں شمولیت کا اعلان کیا ، اس سے زیادہ کچھ نہیں۔ششی تھرورنے کہاہے کہ ای سریدھرن کے بی جے پی میں شمولیت کے اعلان سے وہ بھی حیرت زدہ ہیں۔ لیکن سریدھرن کا زیادہ تر وقت انجینئرنگ کے منصوبوں کو تیار کرنے میں صرف ہوتا ہے ، نہ کہ اس مسابقتی جمہوریت کی پالیسیاں مرتب کرنے اور ان پر عمل درآمد میں۔ سیاست ایک الگ دنیاہے۔ ترووننت پورم سے رکن پارلیمنٹ ششی تھرورنے کہاہے کہ سریدھرن کا کوئی سیاسی تجربہ یا پس منظر نہیں ہے ، لہٰذاامکان ہے کہ وہ کیرالہ اسمبلی انتخابات میں ناتجربہ کار ثابت ہوں گے۔ششی تھرور نے کہا کہ جب انہوں نے 53 سال کی عمر میں سیاست میں قدم رکھا تو وہ یہ سوچ رہے تھے کہ اتنی دیر سے شروع کرنے کے بعد وہ کتنا اثر چھوڑ سکتے ہیں۔ لیکن وہ 88 سالہ شخص کے بارے میں کیاکہہ سکتے ہیں؟ کیا سریدھرن کے داخلے کے بعدکیرالہ اسمبلی انتخابات میں یو ڈی ایف ، ایل ڈی ایف کے ساتھ بی جے پی کا سہ رخی مقابلہ دیکھا جائے گا ، اس سوال کے جواب میں ششی تھرورنے کہاکہ بی جے پی کچھ سیٹیں جیت پائے گی۔ کہیں مقابلہ نہیں ہوگا۔ اگر وہ پچھلی کارکردگی کو بھی دہراتی ہے تویہ بڑی بات ہوگی۔