معروف شاعر فراغ روہوی کا انتقال

کولکاتا:اردو کے معروف شاعر اور سہ ماہی ’’ترکش ‘‘کولکاتا کے مدیر فراغ روہوی کا آج کولکاتا میں انتقال ہوگیا۔ان کا اصل نام محمد علی صدیقی اور قلمی نام فراغ روہوی تھا اور اسی مؤخر الذکر نام سے ادبی دنیا میں ان کی شناخت وشہرت تھی۔ان کی پیدائش16 اکتوبر 1956کوضلع نوادہ، بہار کے روہ نامی گاؤں میں ہوئی تھی اوراسی نسبت سے وہ ’’روہوی‘‘کہلاتے تھے۔طویل عرصے سے کولکاتا میں مقیم تھے۔انھوں نے اردو شاعری کی مختلف اصناف میں طبع آزمائی کی اورغزلوں کے علاوہ ماہیے اور بچوں کے لئے نظمیں بھی لکھی ہیں۔ ان کی کئی کتابیں منظر عام پر آچکی ہیں جن میں جنوں خواب،انتظار کر،ہم بچے ہیں پڑھنے والے،چھیاں چھیاں قابل ذکر ہیں۔پچھلے سال انھوں نے حمد کا ایک عالمی انتخاب شائع کیا جوساڑھے پانچ سوسے زائد صفحات پر مشتمل ہے۔ وہ دس برس تک ماہنامہ ’’کلید ِ خزانہ‘‘ کی مجلس ادارت میں بھی شامل رہے۔انھوں نے کئی فلموں اور ٹیلی فلموں کے لئے گیت بھی لکھے۔