مرکزی وزیر اسمرتی ایرانی بھی کورونا پوزییٹو،بہار میں کرچکی ہیں انتخابی ریلی

نئی دہلی:دیویندرفڑنویس،شہنوازحسین،راجیوپرتاپ روڑی کے بعداب اسمرتی ایرانی کوویڈپوزیٹیوہوگئیں۔یہ لوگ بہارمیں بی جے پی کی انتخابی مہم میں لگے تھے۔اسمرتی ایرانی گزشتہ دنوں مونگیردورے پرگئی تھیں۔ظاہرہے کہ کتنے لوگوں نے اسٹیج شیئرکیاہوگا۔ان ہی خدشات کے سبب اپوزیشن باربارالیکشن ملتوی کرنے پرزوردے رہاتھالیکن بی جے پی کی ضدتھی کہ ہرحال میں الیکشن کرایاجائے اوراب بے قابوبھیڑنے بہارکوکوروناکی وبامیں ڈھکیل دیاہے جب اتنے سنیئرلیڈروں کایہ حال ہے توبے قابوبھیڑکاکیاحال ہوگا۔اس کے علاوہ سوال یہ بھی ہے کہ اتنے بڑے بڑے لیڈران متاثرہوئے کیاانھوں نے سیتوایپ کااستعمال نہیں کیاہوگا؟جب کہ دیگرجگہوں پریہ لازمی کیاگیاہے اوررہنماخطوط جاری ہوتے رہتے ہیں یاپھریہ ایپ کامیاب نہیں ہے۔سوال یہ بھی ہے کہ کیاان لیڈروں نے موم بتی اورشمع نہیں جلائی یاتھالی نہیں بجائی ہے۔جب لیڈروں میں اتنے کیسزبڑھ رہے ہیں توپھرایسے دوروں کی کیاضرورت ہے؟تبلیغی مرکزپرچیخنے والامیڈیااس پرخاموش کیوں ہے؟خدشات کے باوجودیہ لوگ ریلیوں میں کیوں دوڑرہے ہیں؟۔مرکزی وزیر اسمرتی ایرانی نے بدھ کے روز کہاہے کہ کوویڈ 19 میں ہونے والی تحقیقات میں ان کے انفیکشن کی تصدیق ہوگئی ہے۔ ایرانی نے ٹویٹ کرکے یہ معلومات دی ہیں۔ایرانی نے اپنے رابطے میں آنے والے لوگوں پر زور دیاہے کہ وہ جلدہی کوویڈ 19 کی جانچ کروائیں۔ایرانی نے ٹویٹ کیا ہے کہ میرے لیے اس طرح کے اعلان کے لیے الفاظ ڈھونڈناغیرمعمولی بات ہے ۔ میری کوویڈ -19 کی جانچ رپورٹ مثبت آئی ہے اور میں ان لوگوں سے گزارش کرتی ہوں جو میرے ساتھ رابطے میں آئےکہ جتنی جلدی ہو سکے اپنے کوویڈ۔19 کی جانچ کروائیں۔