مہاراشٹرکے گورنرکےخلاف توہین عدالت کانوٹس جاری

ممبئی:مہاراشٹرکے گورنر اور اتراکھنڈ کے سابق وزیراعلیٰ بھگت سنگھ کوشیاری کے خلاف توہین عدالت کا نوٹس جاری کیا گیا ہے۔ منگل کو اتراکھنڈ ہائی کورٹ نے یہ نوٹس جاری کیاہے جس میں کوشیاری سے 4 ہفتوں میں جواب داخل کرنے کوکہاگیاہے۔ یہ نوٹس شرد کمار شرماکی بنچ نے ایک غیر سرکاری تنظیم (این جی او)کی درخواست کی سماعت کے دوران جاری کیا ہے۔اتراکھنڈہائی کورٹ میں قانونی چارہ جوئی کی ایک ٹیم نے اس معاملے میں ایک پی آئی ایل دائر کی ہے۔ اس پٹیشن کی سماعت کرتے ہوئے عدالت نے گذشتہ سال سابق وزریر اعلیٰ کو حکم دیا تھا کہ بقایا کرایہ 6 ماہ کے اندر سرکاری رہائش اوردیگرسہولیات کے بدلے جمع کروائیں۔ عدالتی حکم کے مطابق کوشیاری نے اپنا بقایا کرایہ جمع نہیں کرایاہے جس کی وجہ سے عدالت نے ان کے خلاف منگل کو نوٹس جاری کیا ہے۔تنظیم نے بقایارقم جمع نہ کروانے پر کوشیاری کے خلاف توہین عدالت کی درخواست دائر کی تھی۔ اس پر عدالت نے ریاستی حکومت سے یہ بھی پوچھا ہے کہ حکم کی تعمیل کیوں نہیں کی گئی اوراس کے بعدسابق وزیراعلیٰ کوشیاری کے خلاف مقدمہ کیوں نہیں درج کیاگیا؟