کویت کے امیر صباح الاحمد الصباح نہیں رہے،اکیانوے سال کی عمر میں انتقال

کویت : عرب خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق خلیجی ریاست کویت کے امیر صباح الاحمد الجابر الصباح آج دوپہر 91 برس کی عمر میں امریکہ میں انتقال کرگئے، کویت کے سرکاری نشریاتی ادارے نے امیر کویت کی وفات کا اعلان کیاہے۔ شیخ صباح الاحمد رواں برس جولائی میں علاج کی غرض سے امریکہ منتقل ہوئے تھے، اس سے قبل ان کی کویت میں بھی سرجری کی گئی تھی۔ خیال رہے کہ شیخ صباح الاحمد نے 2006 میں تیل کی دولت سے مالا مال عرب ریاست کویت کے امیر کا منصب سنبھالا تھا جبکہ اس سے قبل 50 برس سے ریاست کے خارجہ امور و پالیسیاں دیکھ رہے تھے۔
شیخ صباح الاحمد 1963 سے 1991 تک کویت کے وزیر خارجہ رہے جبکہ 1993 میں انہیں دوبارہ کویت کے وزیر خارجہ کا منصب سونپ دیا گیا جو 2003 تک ان کے پاس رہا۔ توقع ہے کہ امیر کویت کے بعد ان کے 83 سالہ سوتیلے بھائی اور ولی عہد شہزادہ شیخ نواف الاحمد امیر کویت کا عہدہ سنبھالیں گے۔ واضح رہے کہ آل صباح گزشتہ 260 برس سے خلیجی ریاست کویت پر حکمرانی کررہے ہیں۔ کویت دنیا کے ان چھ ممالک میں شامل ہے جہاں بڑے پیمانے پر تیل کے ذخائر موجود ہیں۔