خالد سیفی کو ملی ضمانت،کڑکڑڈوما عدالت نے ان کےخلاف ثبوتوں کو درست تسلیم نہیں کیا

نئی دہلی:دہلی کی کڑکڑڈوما عدالت نے فسادات کے ملزم خالد سیفی کی ضمانت منظور کرلی ہے۔ عدالت نے ثبوتوں کو درست تسلیم نہ کرتے ہوئے سیفی کی ضمانت منظور کرلی ہے۔ خالد سیفی کودہلی فسادات کی سازش کے ایک معاملے میں (ایف آئی آر 101) کے تحت یہ ضمانت دی گئی ہے۔ سیفی کوعدالت نے پولیس کے ذریعہ پیش کیے گئے شواہد کوسازش کے معاملے میں درست تسلیم نہ کرتے ہوے یہ حکم دیا ہے۔ تاہم سیفی کو ابھی جیل میں ہی رہنا ہوگا۔کڑکڑڈوما عدالت نے اس معاملے میں پولیس پر سخت تبصرے کیا ۔ خالد سیفی کو ضمانت دیتے ہوے عدالت نے کہاکہ اس معاملے میں پولیس نے ناکافی شواہد کی بنا پر ملزم پر چارج شیٹ کرنے میں پولیس نے اپنا دماغ نہیں لگایا جس سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ پولیس نے انتقامی کارروائی کی ہے۔ عدالت نے صرف ایک گواہ کے بیان کی بنیاد پر دہلی فسادات کی سازش کے ثبوت کے طور پر تسلیم کرنے سے انکار کردیا۔