جے این یو کوملی اعلی 1000 انسٹی ٹیوٹ میں جگہ

نئی دہلی: کیو ایس ورلڈ یونیورسٹی رینکنگ میں دنیا کے 1000 اداروں میں جواہر لال نہرو یونیورسٹی (جے این یو) کو شامل کیا گیا ہے، اس کے وائس چانسلر ایم جگدیش کمار نے بدھ کے روز کہا کہ انسٹی ٹیوٹ نے اپنے موجودہ وجود کو مضبوط کیا ہے ، بہت سے نئے کورسز شروع کردیے گئے ہیں جس کی وجہ سے یہ کامیابی حاصل ہوئی ہے۔کمار نے کہا کہ یہ پہلا موقع ہے جب جے این یو نے عالمی یونیورسٹی کی حیثیت سے عالمی درجہ بندی میں 550-600 کی حدود میں درجہ حاصل کیا ہے۔اس کامیابی میں وابستہ تمام طلبہ، عملہ، فیکلٹی ممبران اور سابق طلبہ کی شراکت کے لیے اظہار تشکر کرتے ہوئے وائس چانسلر نے کہا کہ یونیورسٹی تعلیم کے معیار کو بہتر بنانے اور جدت طرازی اور تحقیق کو مستحکم کرنے کی طرف کام کرتی رہے گی۔سائنس، انسانیت اور سماجی علوم کی فیکلٹیوں میں موجودہ کورسز کو تقویت دینے اور متعدد نئے تعلیمی نصاب خاص طور پر گریجویٹ انجینئرنگ کورس اور اٹل بہاری واجپائی اسکول آف مینجمنٹ کے قیام کے سلسلے میں ہماری گذشتہ پانچ سالوں میں ہماری مشترکہ کاوشیں، کاروباری صلاحیتوں کا باعث بنی جس نے اس کامیابی کو حاصل کرنے میں بہت زیادہ تعاون کیا ہے۔کمار نے کہا کہ ہندوستانی اداروں کو قوم کو درپیش مسائل کو حل کرنے پر توجہ دینی چاہیے۔انہوں نے کہا کہ اعلی معیار کے ساتھ یونیورسٹیوں کے عالمی فہرست میں مزید ہندوستانی اداروں کو شامل کرنے سے ہندوستان کو بے حد فائدہ ہوگا۔وائس چانسلر نے کہاکہ اسی کے ساتھ میں اس بات پر زور دینا چاہتا ہوں کہ ہماری یونیورسٹیوں کو ہندوستان کو خودکفیل بنانے اور پائیدار دنیا کے لیے آب و ہوا، توانائی، تعلیم، صحت اور قومی سلامتی کے شعبوں سے متعلق مختلف چیلنجوں سے نمٹنے پر توجہ دینے کی ضرورت ہے۔