جامعہ ملیہ اسلامیہ کے پروفیسراجودھیاکی مسجد ڈیزائن کریں گے

نئی دہلی:اجودھیامیں بننے والی مجوزہ مسجدکانقشہ جامعہ ملیہ اسلامیہ کے پروفیسرڈیزائن کریں گے ۔جامعہ ملیہ اسلامیہ میں آرکیٹیکٹس ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ اخترنے کہا کہ یہ کسی ایک مسجد کو ڈیزائن کرنے کا سوال نہیں ہے۔ حکومت کی دی گئی اراضی پرکیمپس تیار ہوگا۔ اس کیمپس کا مقصد انسانیت کی خدمت کرناہوگا۔ اس کا بنیادی مقصد ہندوستان کی اخلاقیات اور اسلام کی روح کو اکٹھا کرنا ہو گا۔انہوں نے کہا کہ فلسفہ اسلام یاکوئی اور مذہب انسانیت کی خدمت ہے اور اس کا بنیادی مقصدہوگاکہ معاشرے میں ہر ایک کی خدمت کی کوشش کی جائے۔اتر پردیش سنی مرکزی وقف بورڈکے ذریعے قائم کردہ ٹرسٹ انڈو اسلامک کلچرل فاؤنڈیشن اجودھیامیں پانچ ایکڑ پر مشتمل پلاٹ پر مسجد کی تعمیر کی نگرانی کرے گا۔ اترپردیش حکومت نے سپریم کورٹ کی ہدایت پر مسجد کی تعمیرکے لیے ایودھیا کے گاؤں دھنی پور میں پانچ ایکڑ پلاٹ مختص کیا ہے۔جامعہ ملیہ اسلامیہ (جے ایم آئی)میں آرکیٹیکٹس ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ اخترنے کہا کہ ایک ہزار سے زیادہ آرکیٹیکٹس میرے طلبہ رہے ہیں اور وہ پوری دنیامیں پھیلے ہوئے ہیں۔وہ میرے ساتھ تعاون کرسکتے ہیں۔