جھارکھنڈ:ماسک نہیں پہننے پر ہوگاایک لاکھ کا جرمانہ،ہوسکتی ہے 2 سال قید

رانچی:جھارکھنڈ میں کورونا قوانین کو نظرانداز کرنے اور ماسک نہ پہننے کے نتیجے میں 1 لاکھ روپے جرمانہ اور 2 سال قید کی سزا ہوسکتی ہے۔ جھارکھنڈ کابینہ نے متعدی امراض آرڈیننس 2020 منظور کیا۔ اس میں کہا گیا ہے کہ جو لوگ سکیورٹی پروٹوکول کی خلاف ورزی کرتے ہیں اور ماسک نہیں پہنتے ہیں ان پر ایک لاکھ روپے جرمانہ عائد کیا جائے گا۔اس کے ساتھ ہی اگر کوئی قانون کی خلاف ورزی کرتا ہے یا نئے قانون کے تحت ماسک نہیں پہنتا ہے، تو اسے 2 سال جیل میں رہنا پڑ سکتا ہے۔ تاہم آج سڑکوں پر خلاف ورزی کرنے والوں پر کوئی کارروائی نہیں کی گئی ۔ دارالحکومت رانچی کی سڑک پر بہت سے لوگوں کو بغیر ماسک کے دیکھا گیا۔دراصل جھارکھنڈ میں کورونا مریضوں کی تعداد تیزی سے بڑھ رہی ہے۔ اس کی وجہ سے اب سرکاری اسپتالوں میں کوئی جگہ نہیں ہے۔ حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ نجی اسپتال اور بینکویٹ ہال کا استعمال اب آئیسولیشن وارڈ بنانے میں کیا جائے گا ، حالانکہ حکومت کے اس فیصلے کی مخالفت رانچی کے اسٹیشن روڈ پر رہنے والے لوگوں نے کی ہے۔لوگوں کا کہنا ہے کہ حکومت کی جانب سے رہائشی علاقوں میں کورونا مریضوں کے لئے الگ تھلگ وارڈ بنائے جارہے ہیں، جس کی وجہ سے ان کی جان کو خطرہ ہے۔ رانچی کے اسٹیشن روڈ پر مقیم 200 خاندانوں نے حکومت کے اس فیصلے کی مخالفت کی ہے اور کہا ہے کہ آئیسولیشن وارڈکو کہیں اور بنایا جائے ۔