چھٹھ پوجا پر بہار کے عوام این ڈی اے کو چھٹھی کا دودھ یاد دلا دیں،مشکور عثمانی کی حمایت میں وزیراعلی چھتیس گڑھ کا خطاب

جالے:(نازش ہما قاسمی) 87 جالے حلقہ اسمبلی سے مہا گٹھ بندھن کے امیدوار مشکور احمد عثمانی کے انتخابی جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے چھتیس گڑھ کے وزیراعلی بھوپیش بگھیل نے بہار کے عوام سے کہاکہ اس بار چھٹھ پوجا پر موجودہ حکومت کو چھٹھی کا دودھ یاد دلا دیں انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت کسان اور مزدور مخالف ہے آپ عقلمندی کا ثبوت دیتے ہوئے لاک ڈاؤن میں ان کے ذریعے پہنچائے گئے مظالم کا بدلہ موجودہ حکومت کو برخاست کرکے دیں۔ پنجاب کے وزیرخزانہ من پریت بادل نے جذباتی انداز میں کہاکہ میں نے آج تک کسی کے لیے دامن نہیں پھیلایا ہے لیکن آج اپنے بیٹے مشکور عثمانی کے لیے اپنا دامن پھیلا رہا ہوں مجھے امید ہی نہیں مکمل یقین ہے کہ جالے کے عوام مجھے مایوس نہیں کریں گے۔ مشہور شاعر عمران پرتاپ گڑھی نے ہزاروں کی تعداد میں موجود ووٹروں سے کہا کہ مشکور نوجوان ہیں اور مجھے امید ہے کہ جب یہاں ہوا سرکار بنے گی تو آپ اپنے بھائی کو ایوان اسمبلی میں دیکھ کر فخر سے خوشی محسوس کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ راہل جی نے ہاتھ سے لالٹین کو پکڑ لیا ہے اب کمل کا کیچڑ اس کی روشنی نہیں بجھاسکتا۔ انہوں نے اپنے منفرد انداز میں کئی مصرعوں کے ذریعے حکومت پر طنز کیا اور عوام کو ابھارا کہ وہ اس بار مہاگٹھ بندھن کی سرکار لائیں۔ ایم ایل اے کے امیدوار ڈاکٹر مشکور احمد عثمانی نے کہا کہ بہار میں ڈبل انجن کی سرکار کے برے دن شروع ہوچکے ہیں 7نومبر کو عوام پنجہ چھاپ پر مہر لگا کر تیجسوی کی سرکار بنائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ یہاں موجود عوام کے جم غفیر سے پتہ چلتا ہے کہ وہ بدلاو چاہتے ہیں اور یہ تبدیلی کی لہر کمل کو کھلنے اور تیر کو نشانے پر نہیں لگنے دیں گے۔ واضح رہے کہ اس انتخابی جلسے میں سینئر کانگریسی لیڈر بھوشن آزاد، دوگھرا کے سابق مکھیا نور کے علاوہ بڑی تعداد میں مہاگٹھ بندھن کے لیڈران موجود تھے۔