جموں وکشمیر:دہشت گردانہ معاملہ

سابق ڈی ایس پی دیویندر سنگھ سمیت 6دہشت گردوںکے خلاف این آئی اے نے داخل کی چارج شیٹ
نئی دہلی:قومی تحقیقاتی ایجنسی نے جموں و کشمیر پولیس کے سابق ڈی سی پی دیوندر سنگھ کے خلاف ایک دہشت گرد انہ معاملے میںچارج شیٹ دائرکی ہے۔این آئی اے کی چارج شیٹ میں حزب المجاہدین کے دہشت گرد سید نوید سمیت 6 دیگر افراد کے نام شامل ہیں۔عہدیداروں نے بتایا کہ قومی تفتیشی ایجنسی نے پیر کو جموں و کشمیر پولیس کے معطل سپرنٹنڈنٹ پولیس دیویندر سنگھ سمیت 6 افراد کے خلاف چارج شیٹ دائر کی ہے۔ سنگھ کے علاوہ چارج شیٹ میں حزب المجاہدین کے کمانڈر سید نوید مشتاق عرف نوید بابو کے ساتھ ساتھ خود کو وکیل بتانے والے عرفان شفیع میر اور رفیع احمد راتھرکے نام شامل ہیں، عہدیداروں نے بتایا کہ دوسرے دو نام تنویر احمد وانی، ایک تاجر اور نوید بابو کے بھائی سید عرفان احمد ہیں۔قابل ذکرہے کہ دہلی کی ایک عدالت نے جموں و کشمیر کے معطل ڈی ایس پی دیویندر سنگھ کو 19 جون کو ضمانت دے دی تھی۔ سنگھ کو اس سال کے شروع میں سری نگر جموں شاہراہ پر حزب المجاہدین کے دو عسکریت پسندوں کے ساتھ گرفتار کیا گیا تھا۔ ڈی سی پی کے وکیل ایم ایس خان نے کہا تھا کہ عدالت نے سنگھ اور اس کیس کے ایک اور ملزم عرفان شفیع میر کی ضمانت منظور کرلی ہے۔ دہلی پولیس کے خصوصی سیل کے ذریعہ دائر ایک کیس میں عدالت سے دونوں کو راحت ملی۔خان نے کہا کہ قانون کے مطابق، تفتیشی ایجنسی (این آئی اے) گرفتاری کے 90 دن کے اندر چارج شیٹ داخل کرنے میں ناکام رہی، اسے ایک لاکھ روپے کے ذاتی بانڈ اور ایک ہی رقم کے دو مچلکوں پریہ راحت دی گئی تھی۔