جمال خاشقجی کے قتل کے مقدمے کی کارروائی پھر سے شروع ہوگئی

انقرہ:استنبول کی ایک عدالت نے سعودی صحافی جمال خاشقجی کے قتل کے مقدمے کی سماعت دوبارہ شروع کر دی ہے۔ خاشقجی کو دو اکتوبر 2018ء کو استنبول میں واقع سعودی سفارت خانے میں قتل کر دیا گیا تھا۔ اس مقدمے میں 26 سعودی اہلکاروں کو فریق بنایا گیا ہے اور ان کی غیر موجودگی میں یہ کارروائی ہو رہی ہے۔ سعودی عرب نے ان افراد کو ترک حکومت کے حوالے کرنے سے انکار کر دیا ہے۔ امریکی انٹیلیجنس کی طرف سے گزشتہ ہفتے سامنے آنے والی ایک رپورٹ میں کہا گیا تھا کہ خاشقجی کے قتل میں سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کی مرضی شامل تھی۔