انتخابی فتح کی تقریبات اورجشن پرپابندی لگائی جائے ،دیو گوڑانے مودی کوخط لکھا

بنگلورو:سابق وزیر اعظم ایچ ڈی دیو گوڑا نے کوویڈ 19 کی وبا کو پھیلانے پر قابو پانے کے اقدام کے تحت انتخابی فتوحات کے جشن کومحدود کرنے اور ضمنی انتخابات اور بلدیاتی انتخابات کو چھے ماہ تک ملتوی کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔وزیر اعظم نریندر مودی کولکھے گئے ایک خط میں جنتا دل (سیکولر) صدر دیو گوڑا نے کہاہے کہ اگلے چھے ماہ کے لیے عوامی جلسوں پر پابندی عائد کی جانی چاہیے۔ انہوں نے انفیکشن کی روک تھام کے لیے وزیر اعظم کو کچھ تجاویز بھی دیں۔راجیہ سبھاممبرنے کہاہے کہ جن ریاستوں میں اس ماہ انتخابات ہوتے ہیں ، وہاں انتخابی فتح کے جشن کو روکنے کے لیے فوری اقدامات اٹھائے جائیں۔ چونکہ مئی کے بعد کسی بھی ریاستی اسمبلی کی میعادختم نہیں ہورہی ہے ، لہٰذاتمام ضمنی انتخابات اور بلدیاتی انتخابات چھے ماہ کے لیے ملتوی کردیے جائیں۔انہوں نے کہاہے کہ اس عرصے کے دوران الیکشن کمیشن محفوظ انتخابات کے لیے نئے اصول وضع کرسکتا ہے اور اسی کے ساتھ ہی ویکسینیشن مہم کی رفتار کو بھی بڑھایا جاسکتا ہے۔دیوگوڑانے وزیر اعظم کو یقین دلایا کہ وہ اس وباکو قابو کرنے اور ویکسینیشن کو بڑھانے کے لیے مرکزی حکومت کی طرف سے ان کی قیادت میں اٹھائے گئے تمام مثبت فیصلوں اور اقدامات کی حمایت کریں گے۔سابق وزیر اعظم نے کہاہے کہ انھیں یقین ہے کہ یہ وہ وقت ہے جب کام فوری طور پر کیا جاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ ریاستی دارالحکومت میں ریاستی سطح کا وار روم کافی نہیں ہے لیکن یہ تمام ضلعی ہیڈ کوارٹرز میں ہونا چاہیے۔دیو گوڑا نے کہا کہ موجودہ توجہ بڑے شہروں پر مرکوز ہے لیکن غیر شہری اضلاع اور تعلقہ مراکز پر ایک بڑا خطرہ ہے۔دیہات پر فوری توجہ دینے کی ضرورت ہے۔