عمران پرتاپ گڑھی کانگریس کے اقلیتی شعبہ کے نئے سربراہ بنائے گئے،سیاسی حلقوں میں چہ میگوئیاں

نئی دہلی:کانگریس نے شاعر عمران پرتا پ گڑھی کو پارٹی کے اقلیتی شعبہ کانیاسربراہ مقرر کیا ہے۔جمعرات کو پارٹی کی تنظیم کے جنرل سکریٹری کے سی وینوگوپال کے جاری کردہ ایک بیان کے مطابق کانگریس کی صدر سونیا گاندھی نے عمران پرتاپ گڑھی کو صدر مقرر کیا۔پرتاپ گڑھی نے ندیم جاوید کی جگہ لی ہے۔ عمران پرتاپ گڑھی پیشے کے لحاظ سے ایک شاعر ہیں اور انہوں نے گذشتہ کئی انتخابات میں کانگریس کے لیے اسٹارپرچارک کاکردار بھی ادا کیا ہے۔ پچھلے لوک سبھا انتخابات میںانھوں نے کانگریس کے ٹکٹ پر مرادآباد سے مقابلہ کیا حالانکہ انہیں شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔حالاں کہ مسلمانوں کے ایک بڑے طبقے میں کانگریس کے اس فیصلے کو خوش آیند نہیں سمجھا رہا ہے۔ لوگوں کا ماننا ہے کہ عمران پرتا پگڑھی بھلے ہی بطورشاعر اور گانے بجانے کی صلاحیت کی وجہ سے لوگوں کی بھیڑ جمع کرلیتے ہوں،مگر ان کے اندر اتنا سیاسی شعور نہیں ہے کہ وہ پورے ملک کے مسلمانوں کی نمایندگی کرسکیں،کچھ لوگوں کا تو یہ بھی ماننا ہے کہ اقلیتی شعبے کے سربراہ کے انتخاب میں کانگریس سے زیادہ ہوش مندی کا مظاہرہ بی جے پی نے کیا ہے کہ اس نے اقلیتی شعبے کا نائب صدر ایک عالم اور مفتی عبدالوہاب قاسمی کو بنایا ہے اور اس کی وجہ یہ ہے کہ وہ طویل عرصے سے بی جے پی سے وابستہ ہیں اور لمبا سیاسی تجربہ رکھتے ہیں،جبکہ کانگریس نے صرف دو تین سال قبل پارٹی سے وابستہ ہونے والے شخص کوجس کی سیاسی ہوش مندی کی کوئی تاریخ نہیں،نہ کوئی تجربہ ہے،اسے کانگریس نے پورے ملک کے مسلمانوں کا نمایندہ مان لیا ہے۔