آکسیجن ذخیرہ اندوز ی پرعمران حسین کی عدالت میں صفائی،ہم نے عوامی مددکی

نئی دہلی : عام آدمی پارٹی کے ایم ایل اے عمران حسین پردہلی ہائی کورٹ پر آکسیجن سلنڈر ذخیرہ کرنے کا الزام عائد کیاگیا۔ ہائی کورٹ نے ایم ایل اے سے آکسیجن سلنڈر کی ری فل سے متعلق دستاویزات دینے کو کہا ہے۔ اسی کے ساتھ دہلی حکومت سے بھی ایک بیان حلفی داخل کرنے کو کہا گیا ہے کہ آیا عمران حسین کو دہلی کے ریفلرز سے آکسیجن دی گئی ہے یا نہیں۔ ہائی کورٹ اب 13 مئی کو دوبارہ سماعت کرے گا۔سماعت میں عمران حسین کی جانب سے ایڈووکیٹ وکاس پہوہا پیش ہوئے۔ ان کی طرف سے یہ واضح کیا گیا تھا کہ ایم ایل اے نے 10 سلنڈرز کی خدمات حاصل کیں اور فرید آباد سے ریفل ملاجو ضرورت مندلوگوں کو دیئے گئے تھے۔ حسین کے وکیل نے بتایاہے کہ ان کے پاس سب کی رسید ہے۔ لوگوں کے لیے پانچ سات دن سے انتظامات کیے جارہے تھے۔