علم وعمل کے پیکرتھے مولانامحمدقاسم صاحب مظفرپوری:صدرجمعیۃ علماء بہار

مولاناقاسم صاحب مظفرپوری کاانتقال؛ملت اسلامیہ کے لئے عظیم خسارہ:مولانامحمدناظم
جامعہ مدنیہ سبل پور،پٹنہ میں شاہ ہلال احمد قادری، اورمولانامحمدقاسم مظفرپوری کی مغفرت کے لئے دعائیں کی گئیں!
پٹنہ:ہندوستان بالخصوص شمالی بہارکے بزرگ اور ممتاز عالمِ دین،مولانا قاسم صاحب مظفرپوریعلم وعمل کے پیکرتھے،ان کا انتقال علمی اورعوامی حلقوں کے لئے کسی بڑے حادثہ سے کم نہیں ہے،یعنی ایک اورچراغ بجھ گیا،ان خیالات کااظہارجمعیۃ علماء بہارکے صدر محترم جناب مفتی جاویداقبال صاحب قاسمی نے مولانا مظفرپوریؒ کے انتقال پرملال پر اپنے تعزیتی کلمات میں کیا،واضح رہے کہ معروف عالمِ دین، فقیہ العصر،اور انتہائی سادگی کے پیکرجناب مولانا قاسم مظفرپوری قاضی شریعت دارالقضا امارت شرعیہ آج 3 بجے صبح اس دنیائے فانی سے رحلت فرماگئے،جبکہ گذشتہ کل خانقاہ مجیبیہ پھلواری شریف کے جیدعالم دین جناب مولانا شاہ ہلال احمد قادری، بھی انتقال فرماگئے،جامعہ مدنیہ سبل پور،پٹنہ میں ان دونوں بزرگ شخصتیوں کی مغفرت کے لئے دعائیں کی گئیں،اور جمعیۃ علماء بہار کے اراکین وخدام نے دعائیں فرمائیں۔جمعیۃ علماء بہار کے جنرل سکریٹری اور جامعہ مدنیہ سبل پور،پٹنہ کے مہتمم جناب مولانامحمدناظم صاحب قاسمی نے مولانا محمدقاسم صاحب مظفرپوری کے انتقال کو ملت اسلامیہ کے لئے ایک عظیم خسارہ قراردیتے ہوئے کہا:آج ملت اسلامیہ پھر یتیم ہوگئی،اور ایک بزرگ عالم دین سے محروم ہوگئی،انہوں نے کہا:مولانامرحوم کو اللہ نےعلم کاوافر مقدار عطافرمایاتھا،مگر اس کے باوجود ان میں انکساری،عاجزی،کوٹ کوٹ کربھری ہوئی تھیں،وہ چھوٹوں پر شفقت،ونرمی سے پیش آتے،اور اپنے حسن اخلاق سے مسلموں،غیرمسلموں سبھی میں جانے اور پہچانے جاتے تھے،ایک ایسے وقت میں وہ ہم سے رخصت ہوگئے،جب ملت اسلامیہ کو آپ کی شدیدضروت تھی،اللہ ان کی مغفرت فرمائے،اور ترقی درجات سے نوازے،جمعیۃ علماء بہارکے نائب صدرمولانا انوارالحق قاسمی سیتامڑھی ،جمعیۃ علماء پٹنہ کے صدرمحترم اور جامعہ مدنیہ سبل پور ،پٹنہ کے صدرمدرس جناب مولانامرغوب الرحمن صاحب ،جمعیۃ علماء بہارکے ناظم شعبہ تنظیم مفتی خالدانورپورنوی،مفتی عبدالاحد صاحب، مولانامحمدذاکر، مولانامحمدسالم نے بھی رنج وغم کا اظہارفرمایا۔