حکومت کی بے حسی اور تکبر کی وجہ سے 60 کسان زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے:راہل گاندھی

نئی دہلی:کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے منگل کے روز تینوں مرکزی زرعی قوانین کے خاتمے کے مطالبے کا اعادہ کیاہے اورالزام لگایاہے کہ مرکزی حکومت کی بے حسی اور تکبر کی وجہ سے کسانوں کی تحریک کے دوران 60 سے زیادہ کسان اپنی زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے ہیں۔ انہوں نے ٹویٹ کیاہے کہ مودی حکومت کی بے حسی اور تکبر نے 60 سے زائد کسانوں کو ہلاک کیاہے۔کسانوں کے آنسو صاف کرنے کی بجائے یہ حکومت ان پر آنسو گیس کے گولے چھوڑ رہی ہے۔کانگریسی لیڈر نے الزام لگایاہے کہ اس طرح کاظلم سرمایہ داری کے مفادات کو ملی بھگت سے فروغ دینا ہے۔راہل گاندھی نے کہاہے کہ تینوں قوانین کو منسوخ کرنا چاہیے۔ اہم بات یہ ہے کہ ہزاروں کسان دہلی کے قریب اپنے مطالبات کے بارے میں مظاہرے کررہے ہیں۔ کسان تنظیموں کا مطالبہ ہے کہ تینوں زرعی قوانین کو واپس لیا جائے اور کم سے کم سپورٹ پرائس (ایم ایس پی)کی قانونی ضمانت دی جائے۔