ہندوستانی ٹیم کے کپتان وراٹ کوہلی دہائی کے پانچ بہترین وزڈن کرکٹروں میں شامل

لندن:
ہندوستانی کپتان وراٹ کوہلی کو وزڈن کرکٹ المانیک نے چار دیگر کے ساتھ دہائی کے بہترین کرکٹرز کی فہرست میں شامل کیا ہے۔کوہلی کے علاوہ جنوبی افریقہ کے ڈیل اسٹین اور ڈیویلیئر، آسٹریلیا کے اسٹیو اسمتھ اور خواتین کرکٹ کی مایہ ناز آل راؤنڈر ایلس پیری اس فہرست میں شامل ہیں۔کوہلی نے گزشتہ دس سال میں کسی بھی دیگربلے باز کے مقابلے میں 5,775 مزید رن بنائے اور وہ اس دہائی کے بہترین بلے باز رہے۔اس 31 سالہ بلے باز کو دہائی کی وزڈن ٹیسٹ ٹیم کا کپتان مقرر کیا گیا ہے جبکہ وہ ون ڈے ٹیم میں بھی شامل ہیں۔وزڈن نے لکھا ہے کہ وہ باصلاحیت ہے۔انگلینڈ کے 2014 کے دورے کے آخر سے لے کر بنگلہ دیش کے خلاف نومبر میں کولکاتہ ٹیسٹ تک انہوں نے 63 کی اوسط سے رن بنائے جس میں 21 سنچریاں اور 13 نصف سنچریاں شامل ہیں۔اس میں لکھا گیا ہے کہ وہ تینوں بین الاقوامی فارمیٹس میں کم از کم 50 کی اوسط سے رن بنانے والے اکیلے بلے باز ہیں۔یہاں تک کہ حال میں اسٹیو اسمتھ نے بھی تبصرہ کیا تھا کہ ان کے جیسا کوئی نہیں ہے۔وزڈن کے مطابق سچن تندولکر کے ریٹائرمنٹ لینے اور مہندر سنگھ دھونی کے کیریئر کے اختتام کی طرف بڑھنے کے بعد دنیا میں کوئی بھی دیگرکرکٹر ایسا نہیں ہے جو ہر دن کوہلی جیسے دباؤ میں کھیلتا ہو۔کوہلی نے گزشتہ ایک دہائی میں ٹیسٹ کرکٹ میں 27 سنچریوں کی مدد سے 7,202 رن بنائے۔اس کے علاوہ انہوں نے ون ڈے میں 11,125 اور ٹی 20 میں 2,633 رن بنائے۔ان کے نام پر بین الاقوامی کرکٹ میں 70 سنچری درج ہیں اور وہ صرف تندولکر (100) اور رکی پونٹنگ (71) سے پیچھے ہیں۔

    Leave Your Comment

    Your email address will not be published.*