ہندوؤں کا تہوار آتے ہی کچھ لوگوں کوپریشانی ہونے لگتی ہے:کیلاش وجے ورگی

اندور:بی جے پی کے قومی جنرل سکریٹری کیلاش وجے ورگی کا ایک بار پر متنازعہ بیان آیا ہے۔ وہ پردیشی پورہ میں نابینا بچوں کے ساتھ دیوالی منانے آئے تھے ،یہاں کئی ریاستوں میں پٹاخوں پر پابندی کے سوال پر انہوں نے کہا کہ جیسے ہی ہندوؤں کے تہوار آتا ہے،معلوم نہیں کہ کچھ لوگوں کو پریشانی کیوں ہوتی ہے؟ کبھی ہولی کو خشک رنگوں سے کھیلنے کو کہا جاتا ہے تو کبھی دیوالی بغیر پٹاخوں کے منانے کی اپیل کی جاتی ہے۔ دیوالی بچوں کا تہوار ہے ، اسے دھوم دھام کے ساتھ منایا جانا چاہیے۔ خیال رہے کہ کلکٹروں کے پٹاخوں پر پابندی حکم کے متعلق سی ایم شیوراج سنگھ چوہان نے کہا تھا کہ دیوالی کا تہواراور پٹاخے پھوڑنے کے لئے الگ سے حکم جاری کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔ اس سے قبل بھوپال کلکٹر نے دو گھنٹے تک آتش بازی کا حکم جاری کیا تھا ، جس پر وزیر داخلہ نے بھی اعتراض کرکے اس حکم کوہی پلٹ دیا تھا۔ انہوں نے کہا تھا کہ آتش بازی کےلیے کسی وقت کی تعیین کی ضرورت نہیں ہے ، دیوالی ہمارا تہوار ہے اوردھوم دھام سے منایا جانا چاہیے۔مغربی بنگال میں انتخابات کے چیلنجوں کے بارے میں ، کیلاش وجے ورگیہ نے کہا کہ یقینی طور پر چیلنجز موجود ہیں ،ان کے مطابق ،کیونکہ یہ جمہوریت نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں امید ہے کہ الیکشن کمیشن وہاں آزادانہ انتخابات کروانے میں کامیاب ہوگا۔ ورنہ صدرراج قائم ہوناچاہیے۔